The news is by your side.

Advertisement

مقبوضہ کشمیر میں مسلسل کرفیو، لاک ڈاؤن102ویں روزبھی برقرار

سری نگر : مقبوضہ کشمیر میں مسلسل لاک ڈاؤن اور کرفیو کو ایک سودو دن ہوگئے ہیں، انٹرنیٹ اور موبائل سروس کی بندش نے مقبوضہ کشمیر کا رابطہ دنیا سے منقطع کیا ہوا ہے۔

مقبوضہ کشمیرکی جنت نظیروادی قابض بھارت کے نافذ کرفیو کے باعث ایک سوایک دن سے دنیا کی سب سے بڑی جیل بن چکی ہے، شدید سردی میں کھانے پینے کی اشیا اوردواؤں کی قلت نے کشمیریوں کی مشکلات بڑھادیں۔

بھارت کی ریاستی دہشت گردی نے کشمیریوں سے آزادی مانگنے کے جرم میں روزگار، تعلیم اور صحت کی سہولتیں چھین لیں۔ بھارتی ظلم کے آگے سینہ سپر کشمیری نوجوان مسلسل جانوں کا نذرانہ پیش کررہے ہیں۔

گزشتہ روزشہید کشمیری نوجوانوں کے جنازے میں ہزاروں افراد نے شرکت کی، مقبوضہ وادی میں انٹرنیٹ، موبائل سروس مسلسل بند ہے۔

کشمیری صحافیوں نے سری نگرمیں بھارت کے ظالمانہ اقدامات کیخلاف مظاہرہ کیا۔ متعدد علاقوں میں بھارتی فورسز کی کارروائیاں، محاصرے اور گھر گھر تلاشی کے دوران کشمیری نوجوانوں کو گرفتار کرلیا۔ سید علی گیلانی، میر واعظ عمرفاروق، یاسین ملک سمیت کشمیری رہنما نظربند اور جیل میں ہیں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں