The news is by your side.

Advertisement

کشمیری پاکستان کی بقا کی جنگ لڑ رہے ہیں: سراج الحق

لاہور: امیر جماعت اسلامی پاکستان سراج الحق نے کہا ہے کہ کشمیری پاکستان کی بقا کی جنگ لڑ رہے ہیں، مقبوضہ کشمیر میں سینکڑوں گناہ شہید ہو چکے، 300 سے زاید کشمیری بیٹیوں کو بھارتی فوج نے اٹھا لیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق جماعت اسلامی پاکستان کے تحت آج لاہور میں آزادیٔ کشمیر مارچ سے خطاب کرتے ہوئے سراج الحق نے کہا لاہور، کراچی، پشاور سمیت دیگر شہروں میں بھی لوگ کشمیریوں کے لیے نکل رہے ہیں، 16 اکتوبر کو ایوان صدر اور وزیر اعظم ہاؤس کی طرف مارچ کریں گے۔

امیر جماعت اسلامی نے سراج الحق نے 13 اکتوبر کو حیدر آباد میں آزادی مارچ کا بھی اعلان کیا، کہا خیال تھا وزیر اعظم یو این جانے سے پہلے سیاسی جماعتوں کو اکٹھا کریں گے، یو این میں 27 ستمبر کو تقریر کے بعد کئی دن گزر چکے ہیں لیکن مقبوضہ کشمیر میں کرفیو ختم ہوا نہ ہی نظر بند کشمیری رہا ہوئے۔

انھوں نے کہا افسوس ہے حکمرانوں نے کشمیریوں کی محبت کو قدر کی نگاہ سے نہیں دیکھا، کشمیری بیٹی رابعہ نے بھارتی فوج کے پیچھے لگنے پر بھی کشمیر بنے گا پاکستان کا نعرہ لگایا اور چھت سے چھلانگ کر جان دے دی لیکن نعرہ نہیں چھوڑا۔

تازہ ترین:  مقبوضہ کشمیر میں کرفیو کا 63 واں روز

سراج الحق کا کہنا تھا مودی نے گجرات میں 2 ہزار سے زاید مسلمانوں کو شہید کیا، 370 اور 35 اے کا خاتمہ اچانک نہیں ہوا، وزیر اعظم کہتے تھے مودی منتخب ہونے کے بعد کشمیر کا مسئلہ حل ہوگا، اگر جنگ مسئلے کا حل نہیں تو بتائیں حل ہے کیا؟ دنیا کا کون سا ملک مذاکرات سے آزاد ہوا؟

امیر جماعت اسلامی نے کہا ٹرمپ اور مودی چکر باز اور عالمی بد معاش ہیں، انھوں نے اعلان کیا دونوں کی فوجیں مشترکہ مشقیں کریں گی، قوم انتظار کر رہی ہے وزیر اعظم کوئی عملی قدم اٹھائیں، محض تقریروں سے کشمیر کا مسئلہ حل نہیں ہوگا۔

ان کا کہنا تھا کشمیر کے چار دریا پنجاب اور پاکستان کو سرسبز بنا رہے ہیں، کشمیری ماؤں نے فیصلہ کیا ہے کہ 16 اکتوبر کو آزاد کشمیر سے اسلام آباد مارچ کریں گی، کوئی عملی اقدام نہ کیا گیا تو قوم معاف نہیں کرے گی۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں