The news is by your side.

Advertisement

کراچی سرکلر ریلوے کی مکمل بحالی، پاکستان ریلوے نے اشتہار دے دیا

کراچی: صوبہ سندھ کے دارالحکومت کراچی کے شہریوں کی سہولت کے لیے چلائی گئی کراچی سرکلر ریلوے کی مکمل بحالی کے لیے ایک اور قدم اٹھا لیا گیا۔

تفصیلات کے مطابق کراچی سرکلر ریلوے کی مکمل بحالی کے پروگرام کے تحت پاکستان ریلوے نے روٹ کی دیواروں کی تزئین و آرائش کروانے کے لیے اشتہار دے دیا۔

ریلوے حکام کا کہنا ہے کہ اورنگی سے پپری اسٹیشن کی دیواروں پر رنگ و روغن اور شجر کاری کی جائے گی، محکمہ پبلک پرائیوٹ پارٹنر شپ کے ساتھ کام کرنے کا خواہشمند ہے۔

ریلوے حکام کا کہنا ہے کہ سرکلر ریلوے 5 لاکھ مسافروں کو سفری سہولت دینے کی صلاحیت رکھتا ہے، خواہشمند افراد، کارپوریٹ ادارے، کمپنیاں اور آرٹس کالج ڈی سی او آفس سے رابطہ کر سکتے ہیں۔

خیال رہے کہ کراچی کے شہریوں کو سفری سہولت دینے کے لیے چلائی گئی کراچی سرکلر ریلوے تاحال مکمل طور پر بحال نہیں ہو پائی، 20 روز میں ریلوے پر 1 کروڑ کی لاگت آچکی ہے جبکہ اس کی آمدن بمشکل 4 لاکھ روپے ہوئی۔

ٹرین کو 14 کلو میٹر کے ٹریک پر ڈرگ روڈ سے لے کر براستہ گلستان جوہر، گلشن اقبال، لیاقت آباد، ناظم آباد، نارتھ ناظم آباد، اورنگی ٹاؤن، گلبائی، سٹی اسٹیشن تک جانا تھا تاہم یہ ٹرین ابھی تک ریلوے کی مین لائن پر ہی چل رہی ہے۔

گنجان آبادی والے علاقوں میں ابھی تک ریلوے ٹریکس اور اسٹیشنز کلیئر نہیں کیے گئے اور یہاں پر تجاوزات قائم ہیں، اکثر مقامات پر ریلوے ٹریک ختم ہوچکا ہے۔

مین لائن سے چلنے والی سرکلر ٹرین میں روزانہ 100 سے ڈیڑھ سو افراد ہی سفر کر رہے ہیں جبکہ اس کی گنجائش 500 افراد کی ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں