The news is by your side.

Advertisement

چاقو سے 3 قتل، برطانوی عدالت نے خیری سعد اللہ کو سزا سنا دی

ریڈنگ: برطانوی شہر ریڈنگ کی اولڈ بیلی عدالت نے ایک اہم قتل کیس کا فیصلہ سنا دیا۔

تفصیلات کے مطابق 3 افراد کے قتل میں ملوث 26 سالہ خیری سعداللہ کو اولڈ بیلی عدالت نے عمر قید کی سزا سنا دی۔

سعداللہ گزشتہ سال 20 جون کو دہشت گردی کی واردات میں ملوث تھا، ریڈنگ کے پبلک پارک میں چاقو کے وار کر کے 3 افراد کو قتل کیا گیا تھا۔

اولڈ بیلی کورٹ نے اپنے فیصلے میں کہا کہ مجرم خیری سعداللہ کا عمل کھلی دہشت گردی تھا، عدالت اسے تین شہریوں کو قتل کرنے کے جرم میں عمر قید کی سزا سناتی ہے۔

یاد رہے کہ مجرم خیری سعداللہ لیبیا سے 2012 میں برطانیہ آیا تھا۔ بیس جون 2020 کو جنوب مشرقی لندن کی کاؤنٹی برک شائر کے علاقے ریڈنگ کے ایک پارک میں سیاہ فام شہریوں کے حقوق کی تحریک کے حوالے سے احتجاج کیا گیا تھا، جس کے تین گھنٹے بعد پارک میں موجود لوگوں پر اچانک ایک شخص نے چاقو سے حملہ کر دیا۔

رپورٹس کے مطابق حملے کے وقت تین شہری ہلاک ہو گئے تھے جب کہ متعدد شہری شدید زخمی ہو گئے تھے جن میں تین کی حالت تشویش ناک بتائی گئی تھی۔ پولیس نے نوجوان خیری سعداللہ کو موقع پر ہی گرفتار کر لیا تھا۔

لیبیا کے باشندے نے لوگوں پر چاقو حملے کی وجہ یا مقصد نہیں بتایا، اس واقعے نے لوگوں میں اتنی دہشت پھیلا دی تھی کہ برطانوی وزیر اعظم بورس جانسن نے اس کی مذمت کرتے ہوئے کہا کہ ان کی ہمدردی حملے میں متاثر ہونے والے افراد کے ساتھ ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں