The news is by your side.

Advertisement

حیدر عباس رضوی اگر مطلوب ہوتے تو ایئرپورٹ پر گرفتار کر لیے جاتے: خالد مقبول

کراچی: ایم کیو ایم بہادر آباد گروپ کے سربراہ خالد مقبول صدیقی نے حیدر عباس رضوی کی آمد اور روانگی سے متعلق کہا ہے کہ اگر وہ کسی کو مطلوب ہوتے تو ائیرپورٹ سے گرفتار کر لیے جاتے، ان کی آمد پر کسی کو تشویش نہیں تھی۔

ان خیالات کا اظہار انہوں نے کراچی میں صحافیوں سے بات چیت کرتے ہوئے کیا، خالد مقبول صدیقی کا کہنا تھا کہ حیدر عباس چپ چھپا کر نہیں سب کے سامنے آئے تھے کسی کو مطلوب تھے تو ائیرپورٹ پر ہی دھر لیتے، وہ اپنی والدہ سے کیا وعدہ پورا کرنے آئے تھے۔

انہوں نے کہا کہ حیدر عباس رضوی کے پاس دہری شہریت ہے فی الحال وہ الیکشن نہیں لڑ سکتے، ان سے متعلق مختلف قیاس آرائیاں کی جارہی ہیں جس کا حقیقت سے کوئی تعلق نہیں ہے۔


ایم کیو ایم رہنما حیدرعباس رضوی واپس کینیڈا روانہ ہوگئے


خیال رہے کہ متحدہ قومی موؤمنٹ کے رہنما حیدر عباس رضوی 6 جون کو اچانک کینیڈا سے وطن واپس پہنچے تھے بعد ازاں وہ اچانک ہی اگلے روز کینیڈا چلے گئے، ایم کیو ایم نے کہا ہے کہ حیدر عباس کراچی اپنے اہل خانہ اور پارٹی قیادت سے ملنے آئے تھے۔

ذرائع نے کہا تھا کہ حیدر عباس رضوی کا استقبال رابطہ کمیٹی کے رکن فیصل سبزواری اور فرقان اطیب نے کیا تھا، جس کے بعد انہوں نے کنونیئر اور ڈپٹی کنونیئرز سے بھی ملاقات کی جس میں موجودہ سیاسی صورتحال اور ایم کیو ایم دھڑے بندی کے حوالے سے تفصیلی تبادلہ خیال کیا گیا۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں، مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں