کارکن کے قاتل 48 گھنٹے میں نہ پکڑے گئے تو لائحہ عمل کا اعلان کریں گے، خالد مقبول صدیقی -
The news is by your side.

Advertisement

کارکن کے قاتل 48 گھنٹے میں نہ پکڑے گئے تو لائحہ عمل کا اعلان کریں گے، خالد مقبول صدیقی

کراچی : متحدہ قومی موومنٹ کے کنوینئر ڈاکٹر خالد مقبول صدیقی نے کہا ہے کہ کارکن کے قاتل 48 گھنٹے میں نہ پکڑے گئے تو آئندہ کے لائحہ عمل کا اعلان کریں گے۔

یہ بات انہوں نے کراچی میں عباسی شہید اسپتال میں کارکن کی ہلاکت کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہی، خالد مقبول صدیقی کا کہنا تھا کہ حکومت کو واقعے کی تحقیقات کیلئے48گھنٹے کا الٹی میٹم دیتے ہیں، اگر قاتل گرفتار نہیں ہوتے تو پھرآئندہ کا لائحہ عمل دیں گے۔

فائرنگ اسامہ قادری اور خواجہ اظہار الحسن کے دفتر پر کی گئی، انہوں نے کہا کہ فائرنگ کے واقعے میں ایک کارکن شہید اور دوسرازخمی ہوا،حکومت ایم کیوایم کے کارکنان کو تحفظ فراہم کرنے میں ناکام ہے، علی رضا عابدی کے قاتل بھی اب تک گرفتارنہیں ہوسکے۔

مزید پڑھیں: ایم کیو ایم کے دفتر پر فائرنگ، کارکن جاں بحق، پارٹی کا حکومت کو48گھنٹے کا الٹی میٹم

علاوہ ازیں متحدہ کارکن کے جاں بحق ہونے کی خبر سن کر پی ایس پی کے رہنما رضا ہارون نے ایم کیو ایم رہنماؤں عامرخان اور فیصل سبزواری سے رابطہ کیا، رضا ہارون نے نارتھ کراچی میں یوسی آفس پر دہشت گردوں کے حملے کی سخت الفاظ میں مذمت کرتے ہوئے جاں بحق کارکن کیلئے دعائے مغفرت کی۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں