The news is by your side.

Advertisement

اصغر خان کے کیس پر ہم پیشرفت کریں گے: عمران خان

اسلام آباد: پاکستان تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان کا کہنا ہے کہ لاڈلے کے خلاف اصغر خان کا کیس 25 سال تک نہیں سنا گیا۔ اصغر خان کے کیس پر ہم پیشرفت کریں گے۔

تفصیلات کے مطابق پاکستان تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان نے پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا کہ اصغر خان نے بڑی جدوجہد کی۔ اصغر خان نے اپنی پارٹی پاکستان تحریک انصاف میں ضم کی اس پر میں بہت خوش تھا۔

انہوں نے نواز شریف پر تنقید کرتے ہوئے کہا کہ اصغر خان کا لاڈلے کے خلاف کیس 25 سال تک نہیں سنا گیا۔ اصغر خان کیس پر ہم پیشرفت کریں گے۔ اصغر خان نے جدوجہد کی کہ کس طرح پیسے دے کر لاڈلے کو فائدہ دیا گیا۔

عمران خان کا کہنا تھا کہ پاکستان نے کسی اور کی جنگ میں سب سے زیادہ قربانیاں دیں۔ امریکا نے افغانستان میں 16 سال جنگ لڑی، ناکامی کا ملبہ ہم پر ڈال دیا۔ امریکا کے کہنے پر ہم نے قبائلی علاقے تباہ کر دیے۔ ’سیاسی اشرافیہ خود پاکستان کو بدنام کرنے میں لگے ہیں۔ امریکی صدر نے پاکستان کے لیے جو بیان دیے اس کی ذمے دار بھی سیاسی اشرافیہ ہے‘۔

انہوں نے کہا کہ نواز شریف نے فوج کے ڈر سے بھارتی وزیر اعظم سے چھپ کر ملاقات کی۔ کس ملک کا وزیر اعظم اس طرح چھپ کر ملاقات کرتا ہے؟ ’ساجد میر نے کہا کہ شریف برادران نے سعودی عرب کو کہا ہم یمن میں فوج بھیجنا چاہتے تھے۔ شریف برادران نے سعودی عرب کو کہا ہم یمن میں فوج بھیجنا چاہتے تھے راحیل شریف نہیں چاہتے تھے۔ نواز شریف نے امریکی سفیر کو کہا میں نے دباؤ ڈال کر فوج بھجوائی تھی‘۔

عمران خان کا مزید کہنا تھا کہ وزیر اعلیٰ پنجاب نے جماعت الدعوۃ کے خلاف کارروائی کے لیے امریکا سے معلومات لیں۔ ’شریف برادران نے امریکیوں سے کہا ہمیں تیسری باری دلوا دیں‘۔

ان کا کہنا تھا کہ نواز شریف نے امریکیوں کو کہا کہ میں ہمیشہ آپ کا بہترین دوست رہوں گا۔ مولانا فضل الرحمٰن نے امریکیوں سے کہا میں وزیر اعظم بنا تو اچھے تعلقات رکھنا۔ فضل الرحمٰن نے امریکیوں سے کہا کہ میرے پاس بیچنے کے لیے سیٹیں ہیں۔ بھارت میں مسلمانوں کے ساتھ جو سلوک ہو رہا ہے، امریکا نے کیا بھارت کو واچ لسٹ میں ڈالا؟ ختم نبوت کا معاملہ کس کو خوش کرنے کے لیے کیا گیا یہ واضح ہوگیا۔ خواجہ آصف نے واشنگٹن میں کہا ہم لبرل ہیں، تحریک انصاف دینی جماعتوں کے ساتھ ہے‘۔

عمران خان نے کہا کہ موجودہ حکمرانوں نے قوم کی حیثیت ختم کردی ہے۔ یہ ٹرمپ کے سامنے ہاتھ جوڑ کر کھڑے ہوتے ہیں، پرچی سے پڑھتے ہیں۔ تحریک انصاف دنیا میں قوم کی حیثیت بحال کروائے گی۔ ’ان کے اربوں ڈالر باہر پڑے ہیں اسی لیے ٹرمپ کا نام نہیں لے رہے۔ میرے بھی اربوں ڈالر باہر ہوں تو ٹرمپ کا نام نہ لوں۔ ان کا خیال ہے کہ کوئی بچالے گا تو یہ کسی غلط فہمی میں نہ رہیں‘۔

انہوں نے کہا کہ افغانستان میں امن، پاکستان کی ضرورت ہے۔ افغانستان کی بدتر صورتحال پر پاکستان کو الزام دینا افسوسناک ہے۔ افغانستان میں امن نہیں ہوگا تو خطے کو نقصان ہوگا‘۔


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پر شیئر کریں۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں