The news is by your side.

Advertisement

نااہلی فیصلے کے خلاف آج سپریم کورٹ جاؤں گا، خواجہ آصف

سیالکوٹ: سابق وفاقی وزیر خارجہ اور مسلم لیگ ن کے رہنما خواجہ آصف نے اسلام آباد ہائی کورٹ کی جانب سے دیے جانے والے نااہلی فیصلے کے خلاف آج سپریم کورٹ میں  ایپل دائر کرنے کا اعلان کردیا۔

تفصیلات کےمطابق خواجہ آصف نااہلی کے بعد پہلی بار اپنے حلقے اور شہر سیالکوٹ پہنچنے جہاں مسلم لیگ ن کے کارکنان نے اُن کا  استقبال کیا اور اُن پر پھولوں کی پتیاں بھی نچھاور کیں۔

اس موقع پر کارکنان سے خطاب کرتے ہوئے اُن کا کہنا تھا کہ میں نے نوازشریف اور ووٹ کے ساتھ وفاداری کی، ووٹر کو جتنی عزت میں نے دی شاید ہی کسی اور نے دی ہو، 92 ہزار ووٹ لے کر اسمبلی گیا مگر نااہل ہوکر شہر واپس لوٹا۔

مزید پڑھیں: نااہلی کے بعد الیکشن کمیشن نے خواجہ آصف کی اسمبلی رکنیت ختم کردی، نوٹیفکیشن جاری

اُن کا کہنا تھا کہ سیالکوٹ مسلم لیگ ن کا مضبوط قلعہ ہے اور مجھے فخر ہے کہ میرا  تعلق یہاں سے ہے، جلد عام انتخابات ہوں گے اور  عوامی عدالت لگے گی  جس کے بعد لوگ  اپنی مرضی سے امیدوار کو منتخب کریں گے۔

خواجہ آصف کا کہنا تھا کہ میرے حلقے کے لوگوں آپ کو مجھے صادق اور امین ثابت کرنے کے لیے نوازشریف کو ووٹ دینا ہوگا، شیر کے نشان پر مہر لگے کی تو خواجہ آصف سرخرو ہوگا۔

یہ بھی پڑھیں: خواجہ آصف: اقامے سے نااہلی کا سفر

سابق وزیر خارجہ کا کہنا تھا کہ میں سیاسی کارکن تھا اور رہوں گا، ہم پر پہلے بھی بہت بار مشکل وقت آئے، ہاتھوں پر ہتھکڑیاں اور آنکھوں پر پٹی بھی باندھی گئی جب وہ وقت گزر گیا تو موجودہ کیفیت ختم ہونے میں زیادہ دیر نہیں لگے گی۔

خواجہ آصف نے اعلان کیا کہ وہ آج سپریم کورٹ میں نااہلی فیصلے کے خلاف اپیل دائریں گے جس میں اسلام آباد ہائی کورٹ کے فیصلے کو چیلنج کیا جائے گا۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں، مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کےلیے سوشل میڈیا پرشیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں