The news is by your side.

Advertisement

’’نواز شریف کا دفاع کروں گا کسی اور کا دفاع کرنے کیلیے نہیں ہوں‘‘

اسلام آباد: مسلم لیگ ن کے سینئر رہنما خواجہ آصف کا کہنا ہے کہ نواز شریف کا دفاع کروں گا کسی اور کا دفاع کرنے کے لیے نہیں ہوں۔

اے آر وائی نیوز کے پروگرام ’آف دی ریکارڈ‘ میں اینکر پرسن کاشف عباسی نے خواجہ آصف سے سوال کیا کہ مریم نواز، حسین، حسن نواز کی جائیدادیں ہیں جس کے جواب میں خواجہ آصف نے کہا کہ نواز شریف کا دفاع کروں گا کسی اور کا دفاع کرنے کے لیے نہیں ہوں۔

خواجہ آصف نے کہا کہ نواز شریف کو 10 ہزار درہم تنخواہ نہ لینے پر سزا دی گئی، نواز شریف کے خلاف کرپشن کیس نہیں ملا تو لندن فلیٹس سامنے لے آئے، وہ تین بار وزیراعظم، 2 بار وزیراعلیٰ رہے، ایک الزم بتادیں جس کے تحت نواز شریف کو سزا دی گئی۔

انہوں نے کہا کہ شریف فیملی لندن فلیٹس چھپانے کی کوشش نہیں کررہی، شریف فیملی ان فلیٹس میں تین دہائیوں سے رہ رہے تھے۔

ن لیگی رہنما نے کہا کہ موجودہ حکومت کا سب سے بڑا المیہ معیشت ہے، مہنگائی کی گئی، ہر چیز کی قیمت بڑھا دی گئی جو بڑا مسئلہ بن گیا ہے، حکومت نے جو وعدے کیے تھے ایک فیصد بھی پورا نہیں کیا۔

خواجہ آصف کا کہنا تھا کہ حکومت گرانے کے لیے غیرآئینی اور غیرقانونی طریقہ نہیں اپنا رہے، لوگ جمع کرکے ڈی چوک نہیں آئے ہم صرف جلسے کررہے ہیں، جلسے جلوسوں کا کوئی نہ کوئی نتیجہ تو نکلتا ہے۔

انہوں نے کہا کہ قومی اتفاق رائے چاہتے ہیں تاکہ ہم آئینی حدود میں رہنا سیکھیں، میڈٰیا نیشنل ڈائیلاگ کی بات کرے گا تو ہمیں خوشی ہوگی، کسی مسئلے کے حل کے لیے پہنچنا ہے تو سب کو مل کر بات کرنا ہوگی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں