site
stats
پاکستان

وزیر خارجہ خواجہ آصف کے خلاف اقامہ کیس کی سماعت آج ہوگی

اسلام آباد : وزیر خارجہ خواجہ آصف کے خلاف اقامہ کیس کی سماعت آج ہو گی، جسٹس عامر فاروق کی سربراہی میں خصوصی لارجر بینچ سماعت کرے گا۔

تفصیلات کے مطابق وزیرخارجہ خواجہ آصف کےسر پر اقامہ کی تلوار لٹک رہی ہے، وزیر خارجہ خواجہ آصف کے خلاف اقامہ کیس کی سماعت آج ہوگی، اسلام آباد ہائی کورٹ کا لارجر بنچ جسٹس عامر فاروق کی سربراہی میں کیس سنے گا، عدالت نے خواجہ آصف سے تحریری جواب طلب کر رکھا ہے۔

سماعت کرنے والے بنچ میں جسٹس محسن اختر کیانی، جسٹس گل میاں حسن اورنگزیب اور جسٹس عامر فاروق شامل ہیں۔


مزید پڑھیں : اقامہ رکھنے پرخواجہ آصف کو نوٹس جاری، تحریری جواب طلب


پی ٹی آئی رہنما عثمان ڈار نے وزیرخارجہ کے خلاف عدالت سے رجوع کیا تھا، درخواست میں موقف اختیار کیا تھا کہ خواجہ آصف وزیرخارجہ ہونے کے ساتھ ساتھ دبئی میں ایک کمپنی کے ملازم ہیں اورانہوں نے ٹیکس ریٹرنز میں درست اثاثے ظاہر نہیں کیے۔

انہوں نے خواجہ آصف کی یو اے ای کے اقامےکی کاپی بھی عدالت میں پیش کی، درخواست گزار کا کہنا تھا کہ اقامہ رکھنا جرم نہیں اقامہ چھپانا جرم ہے، اقامہ چھپانے پر خواجہ آصف صادق اور امین نہیں رہے۔

درخواست میں تنخواہ چھپانے پر آرٹیکل 62کے تحت نااہل قرار دینے کی درخواست کی گئی تھی۔

واضح رہے سیالکوٹ سے خواجہ آصف کے حلقے سے پی ٹی آئی کے امید وار عثمان ڈار نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر خواجہ آصف کے اقامے کی کاپی جاری کی تھی، جس کے مطابق خواجہ آصف بھی دبئی کی کمپنی میں ملازم ہیں۔


مزید پڑھیں : خواجہ آصف وفاقی وزیر ہونے کے ساتھ دبئی کمپنی کے ملازم نکلے


پی آٹی ٹی کے رہنما عثمان ڈار کا کہنا ہے کہ خواجہ آصف سے متعلق حیرت انگیز انکشافات سامنے آئے ہیں، آرٹیکل63،62کےتحت خواجہ آصف کو بھی گھر بھیجیں گے، اقامہ ان کمپنیوں سے لیا گیا، جنہیں پروجیکٹ کی مد میں فائدہ دیا گیا۔

انھوں نے مزید کہا کہ خواجہ آصف سے متعلق جو دستاویزات ملی ہیں وہ حیران کن ہیں۔


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پر شیئر کریں۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top