The news is by your side.

Advertisement

ٹرمپ کےاسلام دشمن اقدام کےخلاف مؤثرحکمت عملی اپناناہوگی‘خورشیدشاہ

اسلام آباد : قومی اسمبلی میں قائد حزب اختلاف خورشید شاہ نے مقبوضہ بیت المقدس کواسرائیلی دارالحکومت تسلیم کرنےکی مذمت کرتے ہوئے امریکی اقدام کو تباہ کن قراردے دیا۔

تفصیلات کے مطابق اپوزیشن لیڈرخورشید شاہ نے اپنے بیان میں کہا کہ ڈونلڈ ٹرمپ کے اسلام دشمن اقدام کے خلاف مؤثرحکمت عملی اپنانا ہوگی۔

خورشید شاہ نے کہا کہ امریکہ نے دنیا کوامن کے بجائے طاقت سے چلانےکا پیغام دیا، امریکہ کے پیغام کے دوررس اثرات مرتب ہوں گے۔

اپوزیشن لیڈر خورشید شاہ نے کہا کہ او آئی سی کو2 ارب مسلمانوں کی حقیقی ترجمانی کرنی چاہیے، امریکہ نے مسلمانوں کے جذبات کوٹھیس پہنچائی۔


اسرائیلی فورسزکی شیلنگ اور فائرنگ‘ 31 فلسطینی زخمی


انہوں نے کہا کہ امریکہ نےاقوام متحدہ کی قراردادوں کونقصان پہنچایا جبکہ اقوام متحدہ کشمیر، فلسطین پراپنی قراردادوں پر عمل نہ کروا سکا۔

خورشید شاہ نے کہا کہ اقوام متحدہ کا کردار جس کی لاٹھی اس کی بھینس والا ہے، یواین کردارایسا رہا تومسلم ممالک کواس سے وابستہ رہنے کا فائدہ نہیں ہے۔

انہوں نے کہا کہ ٹرمپ کی پالیسیوں سےمسلم دنیا میں کشیدگی پیدا ہوگی، اس مسئلے پر مسلم دنیا کو ایک پلیٹ فارم پرآنا ہوگا۔


امریکا نے یروشلم کو اسرائیلی دارالحکومت تسلیم کرلیا


واضح رہے کہ دو روز قبل امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے یروشلم کو اسرائیل کا دارالحکومت تسلیم کرنے کا اعلان کرتے ہوئے کہا تھا کہ اب امریکی سفارت خانے کو باقاعدہ طور پر یروشلم منتقل کردیا جائے گا۔


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پر شیئر کریں۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں