site
stats
پاکستان

ججوں کو دھمکیاں دینے والا دوسال بعد گورنرہوگا، خورشید شاہ

اسلام آباد : قومی اسمبلی میں اپوزیشن لیڈر سید خورشید شاہ نے کہا ہے کہ ججوں کو دھمکیاں دی گئیں، دھمکیاں دینے والا شخص دو سال بعد گورنر ہوگا۔ حسین نواز کی تصویر کیسے لیک ہوئی تحقیقات ہونی چاہئیں۔

ان خیالات کا اظہار انہوں نے قومی اسمبلی میں اپنے خطاب اور اسمبلی کے باہر میڈیا سے گفتگو میں کیا، اسپیکر ایاز صادق کی زیر صدارت بجٹ اجلاس میں اظہار خیال کرتے ہوئے خورشید شاہ کا کہنا تھا کہ آج ملک میں آئین کے ساتھ مذاق کیا جا رہا ہے۔

ججوں کی دھمکیاں دی گئیں، تفتیشی ارکان کے بچوں پر زمین تنگ کرنے کا کہا گیا، دھمکیاں دینے والا شخص دو سال بعد گورنر ہوگا، نہال ہاشمی نے جو کہا وہ ان کا اپنا نہیں کسی اور کا بیان ہے۔

حکمرانوں کو سوچنا چاہئیے کہ حالات خراب ہوئے تو سب کا نقصان ہوگا۔ حسین نواز کی جے آئی ٹی کی تصویر لیک ہونے کے حوالے سے انہوں نے کہا کہ حسین نواز کی جس عمارت میں تصویر لی گئی ہے وزارت داخلہ کے ماتحت ہے، تصویر کیسے لیک ہوئی تحقیقات ہونی چاہئیں۔

ان کا کہنا تھا کہ بھٹو شہید کو چار چار گھنٹے تک عدالت کے کٹہرے میں کھڑا کیا جاتا تھا۔ خورشید شاہ نے کہا کہ بجلی کی لوڈ شیڈنگ نے پورے ملک میں تباہی مچا رکھی ہے۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top