The news is by your side.

Advertisement

موجودہ حکومت آنے والی حکومت کا حق چھین رہی ہے: خورشید شاہ

اسلام آباد: قومی اسمبلی میں اپوزیشن لیڈر خورشید شاہ نے کہا ہے کہ موجودہ حکومت آنے والی حکومت کا حق چھین رہی ہے۔

تفصیلات کے مطابق قومی اسمبلی کے بجٹ اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے خورشید شاہ نے کہا کہ موجودہ حکومت کی مدت 30 مئی کو ختم ہورہی ہے، اس کوتین یا چار ماہ کا بجٹ پیش کرنا چاہیے تھا۔

انھوں نے حکومت کی جانب سے ایک سال کا بجٹ بنانے پر شدید تنقید کرتے ہوئے کہا کہ اخلاقی طوپرحکومت کو ایک سال کا بجٹ پیش کرنے کاحق نہیں ہے، وہ آئندہ حکومت کا حق چھین رہی ہے۔

اپوزیشن لیڈر کا کہنا تھا کہ مفتاح اسماعیل کو آج مشیر سے وزیر خزانہ بنایا گیا، نوازشریف کا بیانیہ ہے کہ ’ووٹ کو عزت دو‘ لیکن ایک غیرمنتخب شخص کو وزیر بنا کر ووٹ کی عزت کو برباد کیا گیا۔

انھوں نے کہا کہ پاکستان کےعوام اپنی مرضی کی حکومت قائم کریں، یہ دوسری پارلیمنٹ اپنی مدت پوری کرنے جارہی ہے۔

اجلاس میں شاہ محمود قریشی اور وزیراعظم شاہد خاقان عباسی کی تقریر کے بعد اپوزیشن لیڈر خورشید شاہ نے اجلاس کے بائیکاٹ کا اعلان کرتے ہوئے واک آؤٹ کیا۔


بجٹ سے چند گھنٹے پہلے مشیرمفتاح اسماعیل کو وفاقی وزیرخزانہ بنادیا


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں، مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں