The news is by your side.

Advertisement

الیکشن کی تاخیر کی خبریں ملک کے لیے نیک شگون نہیں: خورشید شاہ

اسلام آباد: پیپلز پارٹی کے سینئر رہنما اور سابق اپوزیشن لیڈر خورشید شاہ کا کہنا ہے کہ الیکشن کی تاخیر کی خبریں ملک کے لیے نیک شگون نہیں۔ مارشل لا کوئی نہیں لگا سکتا، چیف جسٹس بھی واضح کر چکے ہیں۔

تفصیلات کے مطابق پیپلز پارٹی کے سینئر رہنما خورشید شاہ کا کہنا ہے کہ نگراں حکومت ثابت کرے کہ انتخاب شفاف ہوں۔ موجودہ حالات کے پیش نظر نگراں حکومت کو ثابت کرنا ہوگا۔ قوی امکان ہے کہ انتخابات مقررہ وقت پر ہوں گے۔

انہوں نے کہا کہ شفاف انتخابات نہ ہوئے تو ملک کے لیے نقصان دہ ہوگا۔ کچھ لوگوں کو الیکشن وقت پر ہونے پر خدشات ہیں۔ الیکشن صحیح معنوں میں احتساب ہوگا، عوامی عدالت کا فیصلہ ہوگا۔

خورشید شاہ کا کہنا تھا کہ جہاں بھی فیصلوں میں رکاوٹ آئی تو وہ ملک کے لیے نقصان دہ ہوتا ہے۔ الیکشن میں فوج، رینجرز اور پولیس کو بھی ہونا چاہیئے۔ ’الیکشن میں خدانخواستہ کچھ ہوگیا تو سنبھالنا مشکل ہوگا‘۔

سینئر رہنما نے مزید کہا کہ پیپلز پارٹی کے خلاف اتحاد بنتے رہتے ہیں۔ دیکھنا ہے کہ پیپلز پارٹی کے خلاف اتحاد کے پیچھے کوئی ہے تو نہیں۔

انہوں نے کہا کہ کہا جا رہا ہے کہ حالات خراب ہو رہے ہیں الیکشن وقت پر نہیں ہوں گے۔ الیکشن کی تاخیر کی خبریں ملک کے لیے نیک شگون نہیں۔ مارشل لا کوئی نہیں لگا سکتا، چیف جسٹس بھی واضح کر چکے ہیں۔

خورشید شاہ نے کہا کہ نگراں وزیر اعلیٰ پنجاب پر مسلم لیگ ن اور پاکستان تحریک انصاف فیصلہ نہیں کر سکے تھے۔ الیکشن کمیشن نے نام کا تعین کر دیا تو اب اعتراض نہیں اٹھانا چاہیئے۔

انہوں نے مزید کہا کہ کالا باغ ڈیم کا معاملہ سیاسی ہے، سی سی آئی اجلاس میں جائے گا۔ کالا باغ ڈیم تکنیکی لحاظ سے دیکھا جائے، فیڈریشن کو خطرہ ہوسکتا ہے۔ ’عدالت کا کام کالا باغ ڈیم پر سیمینارز کروانا نہیں‘۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں۔ مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں