تھر کے لیے کچھ کیا ہے جب ہی وہاں کے لوگوں نے ہمیں ووٹ دیا: خورشید شاہ -
The news is by your side.

Advertisement

تھر کے لیے کچھ کیا ہے جب ہی وہاں کے لوگوں نے ہمیں ووٹ دیا: خورشید شاہ

سکھر: پیپلز پارٹی کے سینئر رہنما اور سابق اپوزیشن لیڈر خورشید شاہ نے کہا کہ پانی کی قلت کا مسئلہ صرف سندھ حکومت کا نہیں، رواں سال سندھ میں برسات نہیں ہوئی۔ ہم نے تھر کے لیے کچھ کیا ہے جب ہی وہاں کے لوگوں نے ہمیں ووٹ دیا۔

تفصیلات کے مطابق پیپلز پارٹی کے سینئر رہنما خورشید شاہ کا کہنا ہے کہ ہمیں دیکھنا ہوگا کہ ہم ملک کے لیے کیا کر سکتے ہیں، تمام اپوزیشن جماعتوں نے کہا ہے کہ آپ حکومت چلائیں۔

انہوں نے کہا کہ آج کسی نے بتایا کہ ڈالر کی قیمت 140 روپے پر پہنچ گئی ہے۔ نیب، ایف آئی اے اور ایف بی آر سے حکومت دباؤ ڈال رہی ہے۔ گالم گلوچ، کسی کو برا کہنے سے معیشت اچھی نہیں بری ہوگی۔

انہوں نے کہا کہ اپوزیشن لیڈر کی گرفتاری سے الجھن اور خوف پیدا ہوگیا۔ اسپیکر قومی اسمبلی سے شہباز شریف کے پروڈکشن آرڈر پر بات ہوئی، اسپیکر نے کہا آئندہ اجلاس کے لیے پروڈکشن آرڈر جاری کروں گا۔

خورشید شاہ نے کہا کہ چیف جسٹس کے عہدے کا احترام ہے، عدالتوں میں بہت سے کیسز زیر التوا ہیں۔ پنجاب و دیگر صوبوں میں قانون الگ الگ طریقے سے استعمال ہوتا ہے۔

انہوں نے کہا کہ اداروں کو اپنی کارکردگی بہتر بنانے کی ضرورت ہے۔ دوسرے اداروں کی کارکردگی کو نشانہ بنانے سے حالات خراب ہوتے ہیں۔ ہم توڑ پھوڑ کی نہیں بلکہ پاکستان کی ترقی کی بات کریں گے، حکومت کو کام کرنے دینا چاہتے ہیں، مگر وہ کارکردگی بہتر کریں۔

انہوں نے کہا کہ پانی کی قلت کا مسئلہ صرف سندھ حکومت کا نہیں، رواں سال سندھ میں برسات نہیں ہوئی، لوگوں نے نقل مکانی کی۔ ’جہاں بھی ریگستانی علاقے ہیں، وہاں مشکلات ہیں۔ ریگستانی علاقوں میں پانی پہنچانا آسان نہیں‘۔

خورشید شاہ نے کہا کہ تھر کے لیے کچھ کیا ہے جب ہی وہاں کے لوگوں نے ہمیں ووٹ دیا۔ پارلیمنٹ ملک چلانے کا ادارہ ہے، وہیں سے پالیسیاں نکلنی چاہئیں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں