The news is by your side.

Advertisement

جنوبی پنجاب صوبہ ابھی نہ بنا تو کبھی نہیں بن سکے گا: خسرو بختیار

لاہور: مسلم لیگ ن سے الگ ہوکر ’جنوبی پنجاب صوبہ محاذ‘ بنانے والے سابق وفاقی وزیر خسرو بختیار نے کہا ہے کہ صوبے کا قیام ملک کی ضرورت ہے، جنوبی پنجاب صوبہ ابھی نہ بنا تو کبھی نہیں بن سکے گا۔

ان خیالات کا اظہار انہوں نے میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے کیا، صدر جنوبی پنجاب صوبہ محاذ خسرو بختیار کا کہنا تھا کہ جنوبی پنجاب صوبے کے لیے باقاعدہ عملی جدوجہد کا آغاز کر دیا ہے، صوبے کے قیام کے لیے محنت اور جدوجہد جاری رکھیں گے۔

انہوں نے کہا کہ ہمارا مشن لسانی، علاقائی کے بجائے انتظامی سطح پر نئے صوبے کا قیام ہے اور نیا صوبہ تمام جماعتوں کے اتفاق رائے سے ہی بن سکتا ہے جس کے لیے ہم تمام جماعتوں کو ہمارے مشن میں ساتھ دینے کا مطالبہ کرتے ہیں۔

چند ہفتوں میں بڑے بڑے نام ایک ایجنڈے پر ہمارا ساتھ دیں گے: خسرو بختیار

مسلم لیگ (ن) کے منحرف رہنما کا کہنا تھا کہ جنوبی پنجاب کے عوام کا مسئلہ غربت، بے روزگاری اور بیڈ گورننس ہے، لاہور میٹرو 240 جبکہ جنوبی پنجاب کا بجٹ 206 ارب ہے، لوگ بنیادی سہولیات سے محروم ہیں، حکومت نے اب تک کوئی خاطر خواہ اقدامات نہیں کیے۔

اسی جماعت سے اتحاد کریں گے، جس کا ایجنڈا جنوبی پنجاب کا قیام ہو: خسرو بختیار

خیال رہے کہ گذشتہ دنوں سابق رہنما مسلم لیگ ن خسرو بختیار نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا تھا کہ ایسی جماعت سے اتحاد کریں گے، جس کا پہلا ایجنڈا جنوبی پنجاب کا قیام ہو، ن لیگ نے اب جنوبی پنجاب کی آفر کی، تو کہوں گا کہ بہت دیر کردی مہرباں آتے آتے، پی ٹی آئی ٹھوس مؤقف سامنے لائے گی، تو ان سے بات ہو سکتی ہے.


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں، مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں