امریکہ کو بتادیا کہ طالبان کے محفوظ ٹھکانے افغانستان میں ہیں، خواجہ آصف -
The news is by your side.

Advertisement

امریکہ کو بتادیا کہ طالبان کے محفوظ ٹھکانے افغانستان میں ہیں، خواجہ آصف

نیویارک : وزیرخارجہ خواجہ آصف نے برکس اعلامئے کو ہارٹ آف ایشیا سے تعبیر کردیا، خواجہ آصف نے کہا کہ امریکی نائب صدر سے کہہ دیا ہے کہ طالبان کے محفوظ ٹھکانے افغانستان میں ہیں انہوں نے ایسی کوئی بات نہیں کی جو ہمارے لئےناگوار ہوتی۔

یہ بات انہوں نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہی، وزیراعظم شاہد خاقان کی امریکی نائب صدر سے ملاقات کی تفصیلات بتاتے ہوئے انہوں نے کہا کہ وزیراعظم نے امریکا کو بتا دیا ہے کہ طالبان کے محفوظ ٹھکانے وہاں ہیں جہاں سے پاکستان مخالف کارروائیاں ہوتی ہیں۔

پاکستان میں طالبان کی محفوظ پناہ گاہوں کے الزامات بھی سراسر بے بنیاد ہیں، پاکستان نے ملک میں امن و امان کی بحال کیا ہے اور اس کے لئے اپنا معاشی نقصان بھی کیا ہے۔

انہوں نے بتایا کہ پاکستان نے امریکا پر واضح کردیا کہ افغانستان کا چالیس فیصد علاقہ طالبان کے پاس ہے، امریکہ طالبان کے محفوظ ٹھکانوں کے حوالے سے ہمارے ساتھ معلومات کا تبادلہ کرے تاکہ ہم ان کے خلاف کارروائی کر سکیں۔

امریکا سے سوال کیا کہ امریکہ ہمیں اربوں ڈالر ز دینے کے دعوے کرتا ہے، بتایا جائے کہ پاکستان کو اربوں ڈالرکہاں اور کب دیئے؟ پاکستان نے خطے میں بحالی امن کیلئے کام کیا ہے۔

امریکی نائب صدرنے کہا کہ خطے میں امن کیلئے پارٹنربنیں۔ خواجہ آصف ان کا مزید کہنا تھا کہ امریکی نائب وزیر خارجہ نے پاکستان کے مؤقف کو دلجمعی سے سنا اور کہا کہ امریکہ پاکستان کی قربانیوں کو قدر کی نگاہ سے دیکھتا ہے، آپ نے جو بیانیہ پیش کیا ہے امریکہ اس کو خراج تحسین پیش کرتا ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں