The news is by your side.

Advertisement

خواجہ برادران پر آئندہ سماعت پر فردِ جرم عائد کرنے کا امکان

لاہور: احتساب عدالت نے پیراگون ہاؤسنگ اسکینڈل میں گرفتار خواجہ سعد رفیق اور خواجہ سلمان رفیق کو ریفرنس کی نقول فراہم کردیں، عدالت کی جانب سے آئندہ سماعت پرخواجہ برادران پرفرد جرم عائد کئے جانے کا امکان ہے۔

تفصیلات کے مطابق آج احتساب عدالت کے جج جواد الحسن کی عدالت میں پیراگون ہاؤسنگ سوسائٹی اسکینڈل کیس کی سماعت ہوئی، اس موقع پر خواجہ برادران کوریفرنس کی نقول فراہم کرنے کے ساتھ ہی تفتیشی افسر نے عدالت کومفرور ملزم ندیم ضیاء، عمر ضیاء اور فرحان علی کی گرفتاری سے متعلق رپورٹ پیش کی۔

تفتیشی افسر نے عدالت کو بتایا کہ کہ ملزموں کے گھروں کے باہر عدالتی نوٹس چسپاں کردئیے گئے ہیں اور گرفتاری کی کوششیں جاری ہیں، جس پر عدالت نے مزید سماعت آٹھ اگست تک ملتوی کردی ہے ۔

سماعت کے بعد مسلم لیگ ن کے رہنما اور سابق وزیر ریلوے خواجہ سعد رفیق نےمیڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ بیرونی جارحیت کے خطرات سے نمٹنے کی بجائےحکومت صرف اپوزیشن کے خلاف ملک میں حالت جنگ میں ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ برطانوی امداد شہباز شریف کے دور میں نہیں آئی ، لہذا یہ بات مضحکہ خیز ہے۔ ساتھ ہی ساتھ انہوں نے کہا کہ تاجروں کی کامیاب ہڑتال نے ثابت کردیا ہے کہ عوام موجودہ حکومت کی پالیسیوں سے تنگ ہیں، میثاق جمہوریت اور میثاق معیشت پر بات کر لی جائے۔

ان کا کہناتھا کہ شیخ رشید کی موجودگی میں ریلوے کا کوئی مستقبل نہیں ہے،حادثات ہونے کی بنیادی وجہ زیادہ ٹرینیں ٹریک پر لانا ہے۔

خواجہ برادران کی پیشی کے موقع پر سیکیورٹی کے سخت انتظامات کیے گئے اور کنٹینر لگا کر سڑکیں
بلاک کر دی گئیں جس سے عوام کو مشکلات کا سامنا کرنا پڑا تھا ۔

واضح رہے 11 دسمبر کو لاہور ہائی کورٹ نے مسلم لیگ ن کے رہنماؤں خواجہ سعد رفیق اور ان کے بھائی سلمان رفیق کی عبوری ضمانت خارج کردی تھی، جس کے بعد قومی احتساب بیورو (نیب) نے دونوں بھائیوں کو حراست میں لے لیا تھا۔

خواجہ برادران کو پیراگون ہاؤسنگ اسکینڈل میں گرفتار کیا گیا ہے جبکہ دونوں بھائی پیراگون ہاؤسنگ اسکینڈل سمیت 3 مقدمات میں نیب کو مطلوب تھے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں