site
stats
سندھ

ویسے تو ملین میں چھ صفر ہوتے ہیں لیکن آج کل دو چار ہی ہوتے ہیں، خواجہ اظہار

کراچی : سندھ اسمبلی میں اپوزیشن لیڈر خواجہ اظہار الحسن نے کہا کہ ہمارے ملین میں تو چھ صفر ہوتے ہیں لیکن آج کل شاید دو تین صفر سے کام چل رہا ہے۔

وہ سندھ اسمبلی کے باہر میڈیا سے گفتگو کر رہے تھے انہوں نے کہا کہ دھرنوں اور مارچ سے کچھ نہیں ہونے والا ہے بات اس سے آگے بڑھ چکی ہے ۔

انہوں نے کہا کہ سستی شہرت کے لیے سڑکوں کو بلاک کرنا اور شہریوں کی مشکلات میں اضافہ کرنا کسی طور مناسب نہیں ہے اگر شہری مسائل پر احتجاج کرنا ہی تھا تو میئر کا ہاتھ بٹاتے۔

خواجہ اظہار الحسن نے کہا کہ ایم کیو ایم پاکستان شہری مسائل کے حق اور میئ کے اختیارات کی بحالی کے لیے ہر قانونی اور جائز اقدمات اٹھا رہی ہے جس کے لیے عدالت سے بھی رجوع کیا گیا ہے۔

انہوں نے کہا کہ سندھ حکومت لوگوں کے مسائل حل کرنے میں سنجیدہ نظر نہیں آتی ہے اسے خواب غفلت سے جگانے کے لیے اسمبلی میں آواز لگاتے رہتے ہیں۔

خواجہ اظہار نے پی ایس پی کا نام لیے بغیر کہا کہ ہمارے ملین مارچ میں تو چھ صفر ہوتے ہیں اور وہ لوگوں نے کراچی حقوق ریلی میں دیکھ بھی لیے لیکن آج کل شاید ملین میں دو چار ہی صفر ہوتے ہیں۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top