The news is by your side.

Advertisement

خیرپور: کتوں سے بچنے کے لیے نہر میں چھلانگ لگانے والے بچے کی لاش مل گئی

گھر میں شارٹ سرکٹ سے آگ، 8 سال کی بچی سمیت 4 خواتین جاں بحق

خیرپور: کتوں سے بچنے کے لیے کینال میں چھلانگ لگانے والے بچے کی لاش مل گئی، گزشتہ روز 3 بچوں نے میر واہ کینال میں چھلانگ لگائی تھی۔

تفصیلات کے مطابق خیر پور میں پاگل کتوں کی بہتات کے باعث ایک افسوس ناک واقعہ پیش آیا، گزشتہ روز پاگل کتوں کے حملے کے خوف سے تین بچوں نے نہر میں چھلانگ لگا دی تھی۔

گاؤں ارباب سمنگ میں گاڑھی پل کے قریب کھیلتے ہوئے کتوں کے خوف سے نہر میں چھلانگ لگانے والے 3 معصوم بچوں میں سے دو کو بچا لیا گیا تھا۔

واقعے کی اطلاع ملنے پر علاقہ مکینوں کی بڑی تعداد موقع پر پہنچ گئی تھی، علاقہ مکینوں نے اپنی مدد آپ کے تحت نہر میں ڈوبنے والے 2 بچوں 8 سالہ عزیز اور 6 سالہ فرمان کو زندہ نکال لیا تاہم 6 سالہ بچہ عارف نہ مل سکا تھا۔

خیر پور میں گھر میں شارٹ سرکٹ سے آگ

خیرپور پولیس کا کہنا ہے کہ نہر میں ڈوبنے والے تیسرے بچے کی لاش آج خاکی شاہ پل کے قریب سے ملی۔

مکینوں کا کہنا ہے کہ خیرپور میں پاگل کتوں کی بہتات ہو گئی ہے لیکن میونسپل انتظامیہ غائب ہے، واقعے کے بعد بھی پاگل کتوں کے مسئلے کی طرف کوئی توجہ نہیں دی گئی ہے۔

محکمہ صحت سندھ کے اعداد و شمار کے مطابق رواں سال کے پہلے پانچ ماہ میں 69 ہزار سے زیادہ کتے کے کاٹے کے کیسز رپورٹ ہوئے، سب سے زیادہ واقعات لاڑکانہ میں رپورٹ ہوئے جہاں کیسز کی تعداد 23 ہزار کے قریب تھی۔

ادھر خیرپور ہی میں بجلی کے شارٹ سرکٹ نے پورا خاندان اجاڑ دیا ہے، گاؤں کولاب جیل میں شارٹ سرکٹ سے گھر میں آگ لگ گئی، جس کے باعث 8 سال کی بچی سمیت 4 خواتین جاں بحق ہوئیں۔

پولیس کے مطابق کولاب جیل میں رسول بخش کاندھڑو کے گھر میں بجلی کے شارٹ سرکٹ سے لگنے والی خوف ناک آگ میں جھلس کر 8 سالہ بچی عذرا، 21 سالہ نویدہ، 34 سالہ نسیمہ اور 65 سالہ نازل جاں بحق ہو گئیں۔

Comments

یہ بھی پڑھیں