site
stats
سندھ

صرف 25 روپے کی خاطر افغانی بچے کو قتل کرنے والا ملزم گرفتار

کراچی : کریم آباد میں فلیٹ کی سیڑھیاں دھونے کے بعد 25 روپے مزدوری مانگنے والے افغانی بچے کو فائرنگ کر کے قتل کرنے والے فلیٹ مالک کو گرفتار کر لیا گیا۔

تفصیلات کے مطابق کریم آباد میں واقع فلیٹ کی سیڑھیاں دھونے اور کچرا اٹھانے کے عوض 25 روپے مزدوری مانگنے پر فلیٹ کے مالک ایاز ملک نے فائرنگ کر کے افغانی بچے کو قتل کردیا جسے امریکا فرار ہونے کی کوشش کے دوران گرفتار کرلیا گیا۔

ایس پی گلبرگ بشیر بروہی نے میڈیا سے بات کرتے ہوئے بتایا کہ ملزم ایاز ملک زیادہ تر امریکا میں ہی رہتا ہے اور کبھی کبھار پاکستان آتا ہے اتوار کے روز افغانی بچے نور آغا نے اپنے ساتھی کے ساتھ مل کر فلیٹ کا زینہ صاف کیا اور پچیس مزدوری مانگی جس پر فلیٹ کا مالک ایاز ملک طیش میں آگیا اور گولی مار کر قتل کردیا۔

ایس پی گلبرگ کا کہنا تھا کہ ملزم ایاز ملکی و غیر ملکی کرنسی کے ساتھ امریکا فرار ہونے کی کوشش کررہا تھا تاہم راستے ہی سے اسے حراست میں لے لیا گیا اور آلہ قتل سمیت ملکی اور غیر ملکی کرنسی برآمد کر لی گئی۔

واضح رہے کہ اتوار کے روز فلیٹ کے مالک کے ہاتھوں قتل ہونے والا افغانی بچہ نور آغا سہراب گوٹھ کا رہائشی تھا اور اپنے دوست کے ہمراہ کچرا اٹھانے اور صفائی ستھرائی کا کام کیا کرتا تھا۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top