The news is by your side.

کسان اتحاد نے وزیراعظم سے ملنے سے انکار کردیا

کسان اتحاد اور حکومت کے درمیان ڈیڈ لاک برقرار ہے اور وفاقی دارالحکومت میں تین روز سے سراپا احتجاج کسان اتحاد نے وزیراعظم سے ملنے سے انکار کردیا ہے۔

اے آر وائی نیوز کے مطابق پاکستان کسان اتحاد کا احتجاج تین روز سے وفاقی دارالحکومت میں جاری ہے اور مطالبات پر حکومت اور مظاہرین میں ڈیڈ لاک برقرار ہے، کسان اتحاد نے وزیراعظم شہباز شریف سے ملنے سے انکار کردیا ہے۔

اس حوالے سے چیئرمین کسان اتحاد خالد باٹھ نے کہا ہے کہ وزیراعظم سے ہماری ملاقات ایک پل کے افتتاح پر کرائی جارہی تھی، ہم اتنے گئے گزرے نہیں ہیں کہ ان سے سر راہ ملاقات کرینگے۔

ان کا کہنا تھا کہ شہباز شریف نے اگر وزیراعظم ہاؤس میں ملاقات کے لیے بلایا تو وہاں ضرور جائیں گے لیکن اس طرح سر راہ ہم ان سے نہیں ملیں گے۔

یہ بھی پڑھیں: کسان اتحاد کا دھرنا تیسرے روز میں داخل، مظاہرین کی ڈی چوک بڑھنے کی کوشش

واضح رہے کہ گزشتہ شب کسانوں اورحکومت کے درمیان مذاکرات کا دوسرادوربھی نتیجہ خیزثابت نہ ہوسکا، وزیرداخلہ رانا ثنا کی یقین دہانیاں کام نہ آئیں، کسان اتحاد کے سربراہ خالد حسین نے کہا ہے کسانوں کا مشترکہ فیصلہ ہے جب تک حکومت بجلی کے ون یونٹ ون ریٹ کا اعلان نہیں کرتی احتجاج ختم نہیں کریں گے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں