site
stats
پاکستان

خیبر پختونخواہ میں سیاحوں کے لیے ٹورسٹ فورس بنانے کا فیصلہ

پشاور: خیبر پختونخواہ پولیس فورس نے صوبے میں آنے والے سیاحوں اور سیاحتی مقامات کے لیے ٹورسٹ فورس بنانے کا فیصلہ کرلیا گیا۔

تفصیلات کے مطابق خیبر پختونخواہ کی ٹورسٹ فورس مالا کنڈ اور ہزارہ ڈویژن میں تعینات کی جائے گی۔ یہ فورس پہلے مرحلے میں 4 مقامات سوات، گلیات، ایبٹ آباد اور مانسہرہ میں کنٹرول روم قائم کرے گی۔

ٹوررسٹ فورس مقامی و غیر ملکی سیاحوں کو سیکیورٹی، گائیڈنس اور موسم کی صورتحال سے باخبر رکھے گی۔

پولیس حکام کے مطابق فورس کو ٹریک سوٹ طرز کا یونیفارم دیا جائے گا۔ فورس کو ہیوی بائیک بھی فرائم کر دی گئی ہے۔

اس نئی ٹورسٹ فورس نے اپنی ٹریننگ کا مرحلہ مکمل کرلیا ہے۔ حکام کے مطابق فورس کو سیاحوں کے لیے گائیڈ لائنز سمیت ہنگامی حالات سے بچاؤ کی ٹریننگ بھی دی گئی ہے۔

یاد رہے کہ خیبر پختونخواہ کے مختلف علاقوں میں ہر سال بڑی تعداد میں مقامی و غیر ملکی سیاح سیر و تفریح کے لیے آتے ہیں جن سے صوبائی حکومت کو کروڑوں روپے کی آمدنی حاصل ہوتی ہے۔

سال میں کچھ ماہ ایسے بھی ہوتے ہیں جب ان علاقوں میں سیاحوں کی بڑی تعداد پہنچ جاتی ہے جس کے باعث انتظامیہ کو ٹریفک جام سمیت دیگر مسائل کا سامنا کرنا پڑتا ہے۔


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پر شیئر کریں۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top