جامعہ کراچی: سب سے زیادہ نمبر حاصل کرنے والا طالب علم پوزیشن سے محروم ku student
The news is by your side.

Advertisement

سب سے زیادہ نمبر حاصل کرنے والا طالب علم پوزیشن سے محروم

کراچی: شہر قائد کی سب سے بڑی درس گاہ جامعہ کراچی کے شعبہ امتحانات کی سنگین غلطیاں سامنے آئی ہیں، ایم اے شعبہ سیاسیات میں اول پوزیشن حاصل کرنے والا طالبعلم پوزیشن سے ہی محروم کردیا گیا۔

تفصیلات کے مطابق کراچی یونیورسٹی کے شعبہ امتحانات کی سنگین غلطی سامنے آئی، سارا سال انتھک محنت کر کے پرچوں میں اول نمبر پر کامیابی حاصل کرنے والا طالب علم پوزیشن سے ہی محروم ہوگیا۔

جامعہ کراچی کے طالب علم سید محمد فہد نے رول نمبر 322032 کے ساتھ سال 2016 میں ایم اے سیاسیات کے آخری سال کے پرچے دیے اور کامیابی حاصل کی تاہم انتظامیہ کی جانب سے اُسے غلط نمبر کی مارک شیٹ جاری کی گئی۔

طالب علم نے اسکروٹنی کے لیے درخواست دائر کی تو اُس میں شعبہ امتخانات کی غلطی سامنے آئی جس کے مطابق مارک شیٹ تیار کرتے وقت اسٹاف ممبر سے ٹائپنگ میں غلطی ہوئی۔

بعد ازاں کراچی یونیورسٹی کی انتظامیہ نے فہد نامی طالب علم کو درست مارک شیٹ جاری کی جس کے مطابق اُس نے مجموعی طور پر 673 نمبر حاصل کر کے پہلی پوزیشن حاصل کی تاہم جب رزلٹ لسٹ سامنے آئی تو طالب علم چکرا کر رہ گیا۔

جامعہ کراچی کے شعبہ امتحانات مسلسل تیسری بار غلطی کرتے ہوئے طالب علم کو پوزیشن ہولڈرز طالب علموں کی فہرست سے نکال دیا اور کم نمبرز حاصل کرنے والی طالبہ کو اول پوزیشن دے دی۔

متعلقہ شعبے کے ذمہ داران نے خود اس بات کا اعتراف کیا کہ محمد فہد نے اول پوزیشن حاصل کی تاہم اُس کا نام پوزیشن ہولڈر طالب علموں کی فہرست میں موجود نہیں ہے۔

طالب علم کا کہنا ہے کہ شعبہ امتحانات کی جانب سے غلط نمبروں والی مارک شیٹ جاری کی جس پر میں نے کنٹرولر امتحانات کو اسکروٹنی کی درخواست جمع کروائی اور پھر مجھے تصیح کر کے درست مارک شیٹ جاری کی گئی جس کے مطابق میں نے اول پوزیشن حاصل کی تھی۔

مزید پڑھیں: یونیورسٹی کی سنگین غلطی، سلمان خان کی تصویر والی ڈگری جاری

شعبہ امتحانات کے مطابق ایم اے سیاسیات کے دفتر میں موجود نتائج کے مطابق طلبہ سویرہ یوسف نے 647 نمبر لے کر پہلی جبکہ کوثر 630 لے کر دوسرے اور  صبا لطیف 627 کے ساتھ تیسرے نمبر پر ہیں۔

دوسری جانب یونیورسٹی کے ترجمان کا کہنا ہے کہ واقعے کی تفتیش کے لیے کمیٹی قائم کردی گئی ہے جو آئندہ چند روز میں تمام تر صورتحال کا جائزہ لے کر رپورٹ پیش کرے گی۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں، مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کےلیے سوشل میڈیا پرشیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں