The news is by your side.

Advertisement

کویت میں غیر ملکیوں سے ڈرائیونگ لائسنس واپس لینے کا فیصلہ

کویت سٹی: کویت میں مقیم ہزاروں تارکین وطن سے ان کے ڈرائیونگ لائسنس واپس لے لیے جائیں گے، یہ اقدام نئے ڈرائیونگ لائسنس کا مربوط نظام تشکیل دینے کے لیے کیا جارہا ہے۔

کویتی میڈیا کے مطابق ملک میں ٹریفک جام کو حل کرنے کے لیے وزارت داخلہ نے غیر ملکیوں کے ہزاروں ڈرائیونگ لائسنس واپس لینے کا منصوبہ بنایا ہے جن کی معیاد پہلے ہی ختم ہو چکی ہے۔

حکام کا کہنا ہے کہ ایسے ڈرائیورز لائسنس کی معیاد ختم ہونے کے باوجود ان کا استعمال جاری رکھے ہوئے ہیں جو قانون کی خلاف ورزی ہے۔

پرانے لائسنس کی معیاد ہونے کے باوجود ڈرائیو کرنے کی ممانعت سے متعلق بہت جلد ایک سرکلر جاری کیا جائے گا، پرانے ڈرائیونگ لائسنس کو محدود کرنے کے لیے پرانے لائسنس رکھنے والوں کو ان کی جگہ نئے ڈرائیونگ لائسنس لینا ہوں گے۔ بلاک شدہ ڈرائیونگ لائسنس کا پتہ لگانے کے لیے ڈیٹا کو ٹریفک ڈپارٹمنٹ، افرادی قوت اور رہائشی امور کے مابین بھی منسلک کیا جائے گا۔

پرانے غیر قانونی لائسنس کے ساتھ تارکین وطن اپنی رہائش (اقامہ) کی تجدید نہیں کر سکیں گے کیونکہ رہائش کی تجدید کے لیے انہیں لائسنس واپس کرنا پڑے گا۔ بہت سے تارکین وطن پرانے ڈرائیونگ لائسنس کے ساتھ ڈرائیو کرتے ہیں اور پکڑے جانے پر انہیں صرف 5 دینار کی فیس کے طور پر جرمانہ کیا جاتا ہے۔

حکام کا کہنا ہے کہ یونیورسٹی کے طلبا کو تقریباً 20 ہزار ڈرائیونگ لائسنس دیے گئے ہیں جن میں سے بیشتر اپنی تعلیم مکمل کر چکے ہیں لیکن ابھی تک انہوں نے اپنے ڈرائیونگ لائسنس واپس نہیں کیے۔

محکمہ ٹریفک ان کے ڈرائیونگ لائسنس کو بلاک کر دے گا تاکہ ان کے لائسنس کی تجدید نہ ہو سکے۔ اسی طرح تقریباً 40 ہزار غیر ملکی ایسے ہیں جن کے پاس ڈرائیونگ لائسنس تو ہیں لیکن جب وہ اپنا پیشہ تبدیل کرتے ہیں تو اپنا ڈرائیونگ لائسنس کھو دیتے ہیں۔

ایسے غیر ملکی جو عام طور پر معیاد ختم ہونے والے لائسنس پر ڈرائیونگ کرتے ہوئے پکڑے جاتے ہیں وہ وزارت داخلہ جاتے ہیں اور 5 دینار ٹریفک جرمانہ ادا کرتے ہیں، ساتھ ہی اپنی رہائش کی تجدید بھی کر سکتے ہیں۔

Comments

یہ بھی پڑھیں