The news is by your side.

Advertisement

کویت منی ایکسچینج مارکیٹ کی اونچی اڑان

قومی تعطیلات میں شہریوں، غیرملکیوں کے سفرمیں اضافے، بیرون ملک اخراجات کیلیے ترسیلات زر اور کرنسی کے تبادلے میں غیرمعمولی اضافہ ہوا ہے۔

غیرملکی نیوز ایجنسی کے مطابق کویت کی قومی تعطیلات کے دوران 2 لاکھ 42 ہزار شہریوں اور غیرملکیوں نے سفر کیا جس کے دوران بیرونی ممالک میں اخراجات کیلیے ترسیلات زر اور کرنسی کے تبادلے کے غیرمعمولی اضافے سے ملک میں کرنسی ایکسچینج مارکیٹ میں زبردست بحالی کا مشاہدہ کیا گیا ہے۔

مختلف کرنسیوں کی خریداری کرنے والے شہریوں اور غیرملکیوں میں زیادہ مانگ کو مدنظر رکھتے ہوئے متعدد منی چینجرز نے تصدیق کی کہ مارکیٹ میں زبردست بحالی دیکھنے میں آرہی ہے۔

منی چینجرز کے مطابق ترک لیرا کا ابھی بھی ایکسچینج مارکیٹ میں کل لین دین کا 50 فیصد سے زیادہ حصہ ہے کیونکہ کویت سے جانے والے مسافروں کیلیے ترکی سب سے زیادہ پسندیدہ مقامات میں سرفہرست ہے۔

اس حوالے سے منی چینجر حبیب اللہ نزات نے مقامی اخبار کو بتایا کہ ایکسچینج مارکیٹ میں کام کی رفتار اچھی رہی ہے۔

ترک لیرا کے حوالے سے حبیب اللہ نے وضاحت کی کہ ترک لیرا کی قدر میں تبدیلیاں سرمایہ کاری کی ایک قسم کے طور پر اس کی مانگ میں اضافہ کرنے میں معاون ہیں ایک اور منی چینجر نے سب سے زیادہ مانگ والی کرنسیوں کا بتاتے ہوئے کہا کہ ترک لیرا، امریکی ڈالر، برطانوی پاؤنڈ اور اماراتی درہم زیادہ مانگ والی کرنسیوں میں سرفہرست ہیں۔

انہوں نے بتایا کہ ترک لیرا کی مارکیٹ میں مانگ اس لیے بھی زیادہ ہے کہ ایک تو کویت سے جانے والے مسافروں کیلیے ترکی سب سے زیادہ پسندیدہ مقام ہے دوسری وجہ یہ ہے کہ لیرا کی شرح تبادلہ شہریوں اور غیرملکیوں کیلیے سفر کی لاگت کو کم کرتی ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں