The news is by your side.

Advertisement

"حکومت پیٹرول بحران کے ذمے داروں کے خلاف کارروائی کرے”

لاہور: عدالت عالیہ نے گذشتہ سال پیدا ہونے والے پیٹرول بحران کے ذمے داران کے خلاف بڑا فیصلہ سنادیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق لاہور ہائی کورٹ میں اظہر صدیق اور سردار فرحت منظور چانڈیو نے ملک میں پٹرولیم بحران کے خلاف درخواست دائر کی تھی، جس پر چیف جسٹس لاہور ہائی کورٹ قاسم خان نےفیصلہ سنادیا ہے۔

عدالت نے فیصلے میں کہا کہ حکومت ان کے خلاف سخت کاررواٸی کرے جنہوں نے مصنوعی بحران پیدا کیا ، ملزمان سے ریکوری کی جائے کیونکہ ان کمپنیوں نے بحران کے دنوں میں عوام سے اربوں روپے لوٹے۔

چیف جسٹس لاہور ہائی کورٹ نے حکم دیا کہ مستقبل میں ایسے بحران سے بچنے کے لیے اسٹوریج بہتر کرے اور اسٹوریج کی کم سے کم مقدار کو برقرار رکھنے کی حکومت پابند ہوگی۔

عدالت نے اپنے فیصلے میں ہدایت دی کہ پیٹرول بحران پر قاٸم کمیشن نے جو سفارشات دیں ان پر من و عن عمل درآمد کیا جائے اور کمیشن کی سفارشات وفاقی کابینہ کے سامنے رکھی جاٸیں جو ان کی روشنی میں اقدامات کرے۔

لاہور ہائی کورٹ نے اپنے فیصلے میں کہا کہ اوگرا کو برقرار رکھنے یا تحلیل کرنے کے بارے میں کمیشن کی سفارش پر وفاقی حکومت کمیٹی تشکیل دے جو اس پر فیصلہ کرے۔

عدالت نے حکم دیا کہ تین ماہ میں عدالتی احکامات پر عمل درآمد کی رپورٹ ہائی کورٹ میں پیش کی جائے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں