site
stats
پاکستان

لاہور: مال روڈ پر ہوٹل سے ملنے والی طالبہ کی لاش ورثہ کے حوالے

لاہور: مال روڈ پر ہوٹل سے ملنے والی طالبہ کی لاش پوسٹ مارٹم کے بعد ورثہ کے حوالے کردی گئی، مکمل تفتیش سے قبل ہی پولیس نے دعوی کیا ہے کہ لڑکی نے مبینہ طور پر خودکشی کی ہے۔

تفصیلات کے مطابق لاہور مال روڈ کے ہوٹل میں طالبہ کی ہلاکت کی گتھی سلجھ نہ سکی، پولیس نے رابعہ نصیر کی لاش پوسٹ مارٹم کے بعد ورثہ کے حوالے کردی۔

پولیس کا کہنا ہے کہ تحقیقات کیلئے رابعہ نصیرکا موبائل ڈیٹا حاصل کرنے کے لیے متعلقہ اداروں کو لکھ دیا گیا، پستول بھی فرانزک لیبارٹری بھجوا دیا گیا جبکہ ہوٹل انتظامیہ کے بیانات بھی ریکارڈ کرلئے گئے ہیں۔

گزشتہ روز لاہور کے مصروف ترین علاقے مال روڈ کے ایک نجی ہوٹل کی لابی کے واش روم سے رابعہ نصیر نامی لڑکی کی لاش ملی، لڑکی کے بیگ سے پستول اور گولیاں بھی برآمد ہوا، سی سی ٹی وی فوٹیج کے مطابق رابعہ ہوٹل میں اکیلی داخل ہوئی، فوٹیج میں دیکھا جاسکتا ہے کہ وہ موبائل پر کسی سے بات کررہی تھی ، واش روم میں جانے کے بعد فائر کی آواز آئی۔

ہوٹل انتظامیہ نے پولیس کو اطلاع دیئے بغیر لڑکی کی لاش کو اسپتال منتقل کردیا، جس نے معاملے کو مشکوک بنادیا ہے، واقعے کی اطلاع ملتے ہی پولیس نے لاش قبضہ میں لیکر مردہ خانہ منتقل کردی ۔

اطلاعات کے مطابق رابعہ نصیر باٹا پور کی رہائشی تھی اور چار بھائیوں کی اکلوتی بہن تھی جبکہ رابعہ کوئن میری کالج کی کرکٹ ٹیم کپتان رہ چکی ہے اور آج کل کنیئرڈ کالج میں کرکٹ کی کلاس دیتی تھی ،تھانہ ریس کورس میں مقتولہ کے بھائی کی مدعیت میں نامعلوم افراد کیخلاف مقدمہ درج کرلیا گیا، پولیس تفتیش کررہی ہے کہ اتنے بڑے ہوٹل میں رابعہ اسلحہ لے کر کیسے داخل ہوئی۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top