The news is by your side.

Advertisement

لاڑکانہ، جوا کھیلنے والے ملزمان کو اسکولوں میں جھاڑو لگانے کا حکم

لاڑکانہ: عدالت نے جوا کھیلنے کا جرم ثابت ہونے پر انوکھا فیصلہ سناتے ہوئے ملزمان کو اسکولوں میں جھاڑو لگانے کی سزا دے دی۔

تفصیلات کے مطابق لاڑکانہ کی عدالت کے سول جج اور جوڈیشل مجسٹریٹ احمد گبول نے جوا کھیلنے کا جرم ثابت ہونے پر 5 ملزمان کو ایک ایک سال تک 3 اسکولوں میں جھاڑو لگانے کی انوکھی سزا سنادی۔

دیکھیں ویڈیو:

ملزمان میں عبدالستار، نورل شر، غضنفر، ارشاد اور عابد شامل ہیں، ملزمان لاڑکانہ شہر کے تین پرائمری اسکولوں میں صفائی کریں گے۔

جوڈیشل مجسٹریٹ احمد گبول نے حکم دیا ہے کہ اسکول ہیڈ ماسٹر ہر ماہ ملزمان کی صفائی کی رپورٹ جمع کرائیں گے۔

واضح رہے کہ لاڑکانہ پولیس نے ایک ماہ پہلے جوئے کے اڈے پر کامیاب کارروائی کرتے ہوئے پانچ ملزمان کو گرفتار کیا تھا۔

یہ پڑھیں: انوکھی عدالتی سزا: ملزم کو باجماعت نمازوں اور مسجد کی صفائی کا حکم

یاد رہے کہ اس سے قبل دادو کی عدالت نے ملزم عامر پر منشیات رکھنے کا جرم ثابت ہونے پر ایک سال تک مسجد کی صفائی اور پانچ وقت باجماعت نماز ادا کرنے کا حکم دیا تھا۔

مزید پڑھیں: عدالت کی ملزم کو قائد اعظم ہاؤس پر پلے کارڈ اُٹھا کرکھڑے رہنے کی انوکھی سزا


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی وال پر شیئر کریں۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں