site
stats
پاکستان

ملک بھر کے وکلاء کا وزیراعظم سے مستعفیٰ ہونے کا مطالبہ

اسلام آباد : وزیراعظم سے استعفی کے مطالبے پر ملک بھر کے وکلا متحد ہوگئے، وزیراعظم پر استعفی کا دباؤ ڈالنے کے لئے وکلا تنظیموں کی جانب سے ہڑتال کی اپیل پر عدالتی کارروائی کا بائیکاٹ کیا گیا۔

تفصیلات کے مطابق وزیراعظم پر استعفی کا دباؤ ڈالنے کے لئے وکلا برادری نے عدالتی کارروائی کا بائیکاٹ کردیا، پاکستان بار، پنجاب بار اور نیشل ایکشن کمیٹی کی اپیل پر ملک بھر میں وکلاء نے ہڑتال کی۔

سندھ بھر میں وکلاء نے ہڑتال کی اپیل پر مثبت ردعمل کا مظاہرہ کیا، کراچی میں وکلاء کا کہنا ہے کہ وزیراعظم اقتدار میں رہنے کا جواز کھو بیٹھے ہیں۔

پنجاب میں بھی وکلا تنظیموں کی اپیل پر عدالتی کارروائی معطل رہی، فیصل آباد اور گوجرانوالا میں وکلانے وزیراعظم سے استعفی کا مطالبہ کیا جبکہ ملتان اور بھاولپور بھی بارایسوسی ایشنز کی اپیل پر پیچھے نہ رہا، وکلا کا کہنا تھا کہ نواز شریف کو اب جانا ہوگا۔

صدر اسلام آباد ہائیکورٹ بار عارف چوہدری کا کہنا تھا کہ حکومت نے جےآئی ٹی کودھمکیاں دیں،سپریم کورٹ سے اظہار یکجہتی کیلئے ہڑتال کریں گے۔

ایبٹ آباد میں وکلاء کا کہنا ہے کہ نوازشریف پر کرپشن ثابت ہوگئی ہے اور انہیں استعفی دینا ہوگا جبکہ کوئٹہ سمیت بلوچستان بھر میں بھی وکلانے عدالتی کارروائی کا بائیکاٹ کیا۔

واضح رہے کہ وکلا کی نیشنل ایکشن کمیٹی پاناما لیکس پر جے آئی ٹی تشکیل دیئے جانے کے بعد پہلے دن سے ہی وزیراعظم کے استعفیٰ کا مطالبہ کررہی ہے جبکہ پاکستان بار کونسل نے 5مئی کو فیصلہ کیا تھا کہ اگر جے آئی ٹی کی رپورٹ وزیراعظم کے خلاف آئی تو وزیراعظم کے خلاف تحریک چلائی جائے گی اور ان سے استعفیٰ کا مطالبہ کیا جائے گا۔


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پر شیئر کریں۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top