The news is by your side.

Advertisement

لاہورہائی کورٹ میں حج پالیسی2019 کے خلاف درخواستوں پرسماعت کل تک ملتوی

لاہور: لاہور ہائی کورٹ میں حج پالیسی 2019 کے خلاف دائر درخواستوں پر سماعت ہوئی، عدالت نے وکلاء کو کل حتمی بحث کے لیے طلب کرلیا۔

تفصیلات کے مطابق لاہور ہائی کورٹ میں حج پالیسی 2019 کے خلاف درخواستوں پر جسٹس عائشہ اے ملک کی سربراہی میں سماعت ہوئی۔

درخواست گزار کی جانب سے مؤقف اختیار کیا گیا ہے کہ حج پالیسی کے مطابق سبسڈی ختم کر دی گئی ہے۔ پرائیویٹ حج آپریٹر حکومت سے سستا حج کرواسکتے ہیں لیکن سستا حج کروانے والے آپریٹرز کو کوٹہ نہیں دیا جا رہا ہے۔

وزارت مذہبی امورنے حج پالیسی 2019 جاری کردی

یاد رہے کہ رواں سال 12 فروری کو وزارت مذہبی امور نے حج پالیسی 2019 جاری کی تھی جس کے مطابق رواں سال ایک لاکھ 84 ہزار 210 پاکستانی حج ادا کرسکیں گے۔

حج پالیسی 2019 کے مطابق سرکاری حج اسکیم کو 60 فیصد اور نجی حج اسکیم کے لیے 40 فیصد کوٹہ مختص کیا گیا۔

وزارت مذہبی امور نے گزشتہ 3 سال سے مسلسل ناکام درخواست گزاروں کے لیے 10 ہزار کا کوٹہ مختص کیا ہے جن کا انتخاب قرعہ اندازی کے ذریعے ہوگا۔

واضح رہے کہ نئی حج پالیسی کے مطابق 2014 سے 2018 کے دوران حج کرنے والے حاجی رواں سال دوبارہ حج ادا کرنے کے اہل نہیں ہوں گے جبکہ عازمین کو پی آئی اے، سعودی ایئرلائن اور ائیربلیو کے ذریعے حجازمقدس روانہ کیا جائے گا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں