The news is by your side.

Advertisement

سیلز ٹیکس وصولی کیلئے ایف بی آر کا ازخود اختیار غیر قانونی قرار

لاہور : لاہور ہائی کورٹ نے کاروباری افراد کے حق میں بڑا فیصلہ سناتے ہوئے سیلز ٹیکس وصولی کیلئےایف بی آرکاازخود اختیار غیرقانونی قرار دے دیا، حکم نامےمیں کہاگیا سیلز ٹیکس وصولی کیلئے ایف بی آرکو پہلے غیررجسٹرڈ افراد کو رجسٹرکرنا ہوگا۔

تفصیلات کے مطابق لاہور ہائی کورٹ میں جسٹس ساجدکی سربراہی میں دورکنی بینچ نے مختلف درخواستوں پر سماعت ہوئی۔

درخواست گزار کی وکیل اجمل خان ایڈووکیٹ نے موقف اختیار کیا کہ ایف بی آر سیلز ٹیکس وصولی کیلئے ازخود رجسٹرڈ اور غیر رجسٹرڈ افراد سے سیلز ٹیکس وصول کر رہا ہے۔

وکیل کا کہنا تھا سیلز ٹیکس قانون کے مطابق رجسٹرڈ اور غیر رجسٹرڈ افراد الگ الگ ہیں، غیررجسٹرڈ افراد کو رجسٹر کرنے کے بعد ہی سیلز ٹیکس وصولی ہو سکتی ہے، ایف بی آر گزشتہ 9 برسوں سے کاروباری افراد کو قانون کی غلط تشریح کے تحت ہراساں کر رہا ہے۔

عدالت نے اپنے فیصلہ میں قرار دیا کہ ایف بی آر کو سیلز ٹیکس وصولی کیلئے ازخود اختیار نہیں ہے، ایف بی آر غیر رجسٹرڈ افراد سے سیلز ٹیکس کی وصولی نہیں کر سکتا۔

فیصلہ میں کہا گیا سیلز ٹیکس وصولی کیلئے ایف بی آر پہلے غیر رجسٹرڈ افراد کو رجسٹر کرے، کاروباری افراد کی سیلز ٹیکس ایکٹ کے تحت رجسٹریشن سے قبل ٹیکس وصولی غیرقانونی ہے۔

یاد رہے گذشتہ ماہ لاہور ہائی کورٹ نے ایف بی آر کو سیلز ٹیکس کی وصولی کیلئے براہ راست بنک اکاؤنٹس منجمد کرنے سے روک دیا تھا اور حکم دیا تھا کہ بنک اکاؤنٹس منجمد کرنے سے قبل سیلز ٹیکس کے قانون پر مکمل عمل درآمد کو یقینی بنایا جائے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں