The news is by your side.

Advertisement

لاہور ہائیکورٹ : تین کمسن بچے نانی سے لے کر والد کے حوالے

لاہور : عدالت نے تین کمسن بچے نانی سے لے کر والد کے حوالے کردیئے۔ بچے اپنے والد کے ساتھ جانے سے انکار کرتے رہے۔اس موقع پر نانی اور خالہ بھی زارو قطار روتے رہے۔

تفصیلات کے مطابق لاہور ہائیکورٹ میں جسٹس ارم سجاد گل نے بچوں کی حوالگی کیس کی سماعت کی۔ بچوں کے والد رمضان نے مؤقف اختیار کیا کہ اس کی بیوی کی وفات کے بعد نانی نے بچے زبردستی اپنے پاس رکھ لئے۔ لہٰذا بچے اس کی تحویل میں دیئے جائیں۔

عدالت میں بیان دیتے ہوئے بچوں کی نانی نسرین کا کہنا تھا کہ بیوی کی وفات کے بعد رمضان بچوں کو میرے پاس چھوڑ کر چلا گیا تھا جس کے بعد انہوں نے بچوں کی پرورش کی ۔

عدالت نے تین کمسن بچوں ملائکہ، حیدر اور طیبہ کو نانی سے لے کر والد کے حوالے کردیا جس پر بچوں کی خالہ اور نانی زراو قطار روتے رہے۔

جبکہ بچوں کی نانی نسرین کو غشی کے دورے بھی پڑنے لگے۔ ۔بچوں نے بھی والد کے ساتھ جانے سے انکار کردیا اور رو رو ہلکان ہوگئے۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں