The news is by your side.

Advertisement

لاہور ہائیکورٹ، شہباز شریف کی نا اہلی کی درخواست مسترد

لاہور: لاہور ہائی کورٹ نے وزیر اعلٰی پنجاب شہباز شریف کی نااہلی کے لیے درخواست کو نا قابلِ سماعت قرار دیتے ہوئے مسترد کردیا، درخواست نے وزیراعلیٰ کو اختیارات سے تجاوز اور حلف کی پاسداری نہ کرنے کا مرتکب کہتے ہوئے نااہل قرار دینے کی استدعا کی تھی۔

درخواست کی سماعت لاہور ہائی کورٹ کی جسٹس عائشہ اے ملک نے کی۔ عدالت کے روبرو تحریک انصاف کے رہنما اعجاز چوہدری کے وکیل بابر اعوان نے کہا کہ وزیر اعلی پنجاب نے اپنے اثاثے چھپائے، رقم غیرقانونی طور پر بیرون ملک منتقل کی اور قوم سے غلط بیانی کی،وزیر اعلی پنجاب نے اپنے اختیارات کا غلط استعمال کرتے ہوئے صوبے میں من پسند افسران کو میرٹ کے برعکس سیاسی مقاصد کے لیے تعینات کیا۔

انہوں ںے کہا کہ  وزیر اعلی پنجاب میاں شہباز شریف نے قوانین کی خلاف ورزی کرتے ہوئے اپنی شوگر ملیں ایک سے دوسرے علاقے میں منتقل کیں جب کہ قانون اس کی اجازت نہیں دیتا، وزیراعلی نے اپنے اختیارات کا ناجائز استعمال کر کے بہت سے غیر قانونی احکامات جاری کیے لہذا انھیں نااہل قرار دیا جائے ۔

سرکاری وکیل شان گل نے عدالت کو بتایا کہ درخواست گزار نے کمپنی کے حوالے سے درخواست دائر کی جو ناقابل سماعت ہونے کی بناءپر مسترد کی جائے۔

عدالت نے ریمارکس دئیے کہ منتخب نمائندے کے خلاف فورم موجود ہونے کے باوجود درخواست گزار نے عدالت سے کیوں رجوع کیا۔

عدالت نے ریمارکس دئیے کہ کسی رکن اسمبلی کے خلاف ریفرنس بھیجوانا اسپیکر کا اختیار ہے لہذا درخواست گزار کو ان سے رجوع کرنا چاہیے تھا۔

عدالت نے فریقین کے وکلا کے دلائل سننے کے بعد درخواست خارج کردی۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں