The news is by your side.

Advertisement

بلیک لسٹ معاملہ: شہباز شریف نے دائر درخواست واپس لے لی

لاہور: ہائی کورٹ نے قائد حزب اختلاف قومی اسمبلی میاں شہباز شریف کی جانب سے دائر کی گئی متفرق درخواستیں نمٹادیں۔

تفصیلات کے مطابق لاہور ہائی کورٹ میں شہباز شریف کا نام بلیک لسٹ سے نکلوانے سے متعلق درخواست پر سماعت ہوئی۔ کیس کی سماعت لاہور ہائی کورٹ جسٹس باقر علی نجفی نے کی۔

سماعت کے آغاز پر شہباز شریف کے وکیل امجد پرویز ایڈووکیٹ نے عدالت کو آگاہ کیا کہ حکومت نے شہباز شریف کا نام ای سی ایل میں شامل کردیا اور اسی صورت میں یہ درخواستیں قابل پیش رفت نہیں رہیں لہذا درخواستیں واپس لینے کی اجازت دے ۔

اس موقع پر کمرہ عدالت میں موجود وفاقی حکومت کے وکیل نے درخواستیں واپس لینے کی مخالف کرتے ہوئے موقف اپنایا کہ وفاقی حکومت نے لاہور ہائیکورٹ کی جانب سے شہباز شریف کو بیرون ملک جانے کی اجازت دینے کے معاملے پر سپریم کورٹ سے رجوع کیا ہے، کسی بھی فیصلے سے قبل درخواستوں پر پہلے حکومت کا موقف جائزہ لیا جائے۔

جس پر شہباز شریف کے وکیل نے کہا کہ قانون میں درخواست واپس لینے کی ممانعت نہیں ہے. سماعت کے دوران عدالت نے ریمارکس دیئے کی ادارے جتنے حکومت کے ہیں اتنے ہی عام شہری کے ہیں۔

بعد ازاں عدالت نے شہباز شریف کو درخواستیں واپس لینے کی اجازت دے دی۔

شہباز شریف کے وکیل نے عدالت کو بتایا کہ اپوزیشن لیڈر کا نام ای سی ایل میں شامل کرنے کا اقدام چیلنج کیا جائے گا انہوں نے کہا کہ عدالتی احکامات پر عمل نہ ہونے پر توہین عدالت کی کارروائی کا حق محفوظ رکھتے ہیں۔

Comments

یہ بھی پڑھیں