The news is by your side.

Advertisement

نجی میڈیکل کالجز کی میرٹ لسٹیں اور خالی نشستوں کی تفصیلات طلب

لاہور : لاہور ہائی کورٹ نے نجی میڈیکل کالجز کی میرٹ لسٹیں ، خالی نشستوں کی تفصیلات اور نئے داخل طلبا کے نام اور میرٹ  کی تفصیلات طلب کرلیں اور طلبا کو دوسرے کالجوں میں بھیجنے پر حکم امتناع میں توسیع کردی۔

تفصیلات کے مطابق لاہور ہائی کورٹ میں نجی میڈیکل کالجزمیں ری ایڈمیشن پالیسی کے خلاف کیس کی سماعت ہوئی ، عدالت نے نجی میڈیکل کالجزکےطلبا کو دوسرے کالجوں میں بھیجنے پر حکم امتناع میں توسیع کردی۔

عدالت نے استفسار کیا بتایا جائے نجی میڈیکل کالجزمیں کتنی نشتیں خالی ہیں؟ بلیم گیم کی بجائے معاملہ حل کیوں نہیں کیاگیا؟ جس پر نمائندہ یوایچ ایس نے بتایا نجی میڈیکل کالجزمیں میرٹ کی بنیاد پر لسٹ بنائی گئی، کالجز میں داخلے کسی دباؤ کے بغیر میرٹ پرکیےگئے۔

عدالت نے استفسار کیا کہ اگرمیرٹ ہوتاتوپھردرخواستیں کیوں آتیں؟ 85 فیصد تک نمبر لینے والے طلبا عدالت کےسامنےکھڑے ہیں، تصدیق کریں کہ 65 فیصد نمبر والوں کوکیسےداخلہ مل گیا؟

عدالت کا کہنا تھا کہ اسلام آباد:ناقص پالیسی اورانتظامات سےخرابی پیداہوئی، سارے داخلوں کو چھیڑے بغیر معاملے کا حل نکالا جائے، جس پر وکیل نےکہا پی ایم ڈی ایس نے یو ایچ ایس کونئی میرٹ لسٹیں جاری کرنے سے روکا، میرٹ پر پورا اترنے کے باوجود یو ایچ ایس نے ری ایڈمیشن پالیسی نافذ کی، عدالت ری ایڈمیشن پالیسی کالعدم قرار دے۔

لاہورہائی کورٹ نے نجی میڈیکل کالجزکی میرٹ لسٹیں طلب کرلیں جبکہ کالجزمیں خالی نشستوں کی تفصیلات اور نئےداخل طلبا کےنام اورمیرٹ کی تفصیلات بھی طلب کیں

fb-share-icon0
Tweet 20

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں