The news is by your side.

Advertisement

معذور افراد کو ’خصوصی فرد‘ لکھا جائے، عدالت کا حکم

لاہور: ہائی کورٹ نے معذور افراد کے لیے قانون مین گونگا، بہرا اور لنگڑا کے الفاظ حذف کرنے کا حکم دیتے ہوئے ہدایت کی ہے کہ قانون میں معذور افراد کو خصوصی اہمیت کا حامل فرد قرار دیا جائے۔

تفصیلات کے مطابق لاہور ہائی کورٹ میں معذور افراد کے لیے مخصوص الفاظ استعمال کرنے کے خلاف درخواست دائر کی گئی جس میں قانون میں درج ہونے والے مختلف الفاظ کو چیلنج کیا گیا۔

درخواست میں نشاندہی کی گئی کہ  1981کے آرڈیننس میں معذور افراد کے لیے  گونگے ،بہرے اور اندھے کے الفاظ درج ہیں جن کی وجہ سے معذور افراد کی معاشرے میں تضحیک ہوتی ہے لہذا ایسے تمام الفاظ کو قانون سے حذف کیا جائے.

سرکاری وکیل نے عدالت کو بتایا کہ معذور افراد کے حوالے سے قانون میں ترمیم کرکے اصلاحات متعارف کروائی جا رہی ہیں جس کے بعد ان پر عملدرآمد شروع کیا جائے گا۔

 چیف جسٹس لاہور ہائیکورٹ جسٹس منصور علی شاہ نے درخواست پر فیصلہ سناتے ہوئے حکم دیا کہ معذور افراد کو خصوصی فرد کہا اور لکھا جائے۔

لاہور ہائی کورٹ کے چیف جسٹس نے حکم دیا کہ 1981 کے آرڈیننس سے  گونگے، بہرے اور اندھے کے الفاظ حذف کیے جائیں اور اندھے کے لیے بینائی سے محروم کا لفظ استعمال کیا جائے۔


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں