The news is by your side.

لیبیا : پیٹرول اور گیس کی تلاش پر عائد پابندی ختم

طرابلس : لیبیا حکومت نے ملک میں پیٹرول اور گیس کی تلاش پر عائد پابندی ختم کرنے کا اعلان کیا ہے، مذکورہ پابندی سکیورٹی خدشات کے پیش نظر ماہ نومبر میں لگائی گئی تھی۔

لیبیا قومی اتحاد حکومت نے اپنے بیان میں کہا ہے کہ ہم لیبیا قومی پیٹرول کمپنی اور پیٹرول اور گیس کی تلاش و پیداوار کی بین الاقوامی کمپنیوں کو مطلع کرتے ہیں کہ پیٹرول اور گیس کی تلاش پر پابندی ختم کر دی گئی ہے۔

غیرملکی خبر رساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق حکومتی بیان میں مذکورہ کمپنیوں سے لیبیا میں دوبارہ سے سرگرمیاں شروع کرنے کی اپیل کی گئی اور کہا گیا ہے کہ حکومت اس معاملے میں ضروری تعاون اور کام کا محفوظ ماحول فراہم کرنے پر تیار ہے۔

بیان میں کہا گیا ہے کہ پابندی ہٹانے کا فیصلہ ملک میں سلامتی کی صورتحال کے منطقی اور حقیقت پسندانہ تجزئیے کے بعد کیا گیا ہے۔ پیٹرول لیبیا کی بنیادی آمدنی کا وسیلہ ہے۔ لیبیا اس سیکٹر کے فروغ اور عالمی منڈیوں میں پیٹرول کی فراہمی جاری رکھے گا۔

واضح رہے کہ لیبیا نے 24 نومبر کو ملک میں سکیورٹی خدشات کی وجہ سے پیٹرول اور گیس کی تلاش کے کاموں پر پابندی کا اعلان کیا تھا۔

لیبیا کو ماہِ نومبر سے پیٹرول کے برآمدی ممالک کی تنظیم اور اوپیک پلس ممالک کی پیٹرول پیداوار میں 2 ملین بیرل کمی کے فیصلے سے معاف رکھا گیا تھا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں