The news is by your side.

سست طرز زندگی اور زیادہ میٹھا کھانے والے مردوں کے خون میں تشویشناک تبدیلی کا انکشاف

میسوری: امریکی یونیورسٹی آف میسوری اسکول آف میڈیسن کی حالیہ تحقیق میں انکشاف ہوا ہے کہ طرز زندگی میں مختصر مدت کی تبدیلیاں خون کی نالیوں میں انسولین کی حساسیت کو متاثر کر سکتی ہیں۔

یہ پہلا انسانی مطالعہ جس نے یہ نکتہ دریافت کیا ہے، یہ تحقیق سائنسی جریدے ’اینڈوکرائنولوجی‘ میں شائع ہوئی ہے، اس مطالعے میں کہا ہے کہ طرز زندگی میں چھوٹی تبدیلیاں انسولین کی حساسیت کو متاثر کرسکتی ہیں۔

تحقیق سے یہ بھی معلوم ہوا ہے کہ یہ تبدیلیاں مردوں اور عورتوں کو مختلف طریقے سے متاثر کرتی ہیں۔

محققین کا کہنا ہے کہ موٹاپے اور ٹائپ 2 ذیابیطس میں خون کی نالیوں میں انسولین کی مزاحمت ہوتی ہے، جس سے ویسکولر (خون کی نالیوں) کا مرض لاحق ہوتا ہے۔

اس تحقیق کے لیے محققین نے 36 نوجوان اور صحت مند مرد اور خواتین کے خون کی نالیوں میں انسولین کی مزاحمت کی جانچ کی، اس کے لیے انھوں نے ان خواتین و حضرات سے 10 دن تک کم سے کم جسمانی سرگرمی کروائی۔ محققین نے ان کے قدموں کی تعداد کو روزانہ 10,000 سے 5,000 تک کم کر دیا۔ تمام شرکا نے اپنے میٹھے مشروبات کی مقدار میں تقریبا 6 کین تک سوڈا کا اضافہ بھی کیا۔

ایسوسی ایٹ پروفیسر آف میڈیسن کمیلا مینرک نے کہا کہ ہم یہ جانتے ہیں کہ انسولین کی مزاحمت اور قلبی امراض کے کیسز مردوں کے مقابلے میں خواتین میں (سن یاس سے قبل) کم ہوتے ہیں، لیکن ہم یہ دیکھنا چاہتے تھے کہ اگر کچھ وقت کے لیے جسمانی سرگرمی کم کر دی جائے اور خوراک میں میٹھا بڑھا دیا جائے تو ایسی صورت میں ان پر کیا اثرات مرتب ہوتے ہیں۔

نتائج سے معلوم ہوا کہ صرف مردوں میں کاہلی والے طرز زندگی اور شوگر کی زیادہ مقدار کی وجہ سے ان کی ٹانگوں میں انسولین سے چلنے والے خون کے بہاؤ میں کمی واقع ہوئی، اور ایڈروپن نامی پروٹین میں بھی کمی آ گئی، یہ پروٹین انسولین کی حساسیت کو کنٹرول کرتا ہے اور قلبی امراض کے لیے ایک اہم بائیو مارکر ہے۔

ان نتائج سے یہ نشان دہی ہوتی ہے کہ شوگر کی زیادہ مقدار لینے اور ورزش کم کرنے سے خون کی نالیوں میں انسولین کے خلاف جو مزاحمت پیدا ہوتی ہے، اس کا جنس سے گہرا تعلق ہے، یعنی مردوں اور خواتین میں اس سلسلے میں فرق پایا جاتا ہے۔

پروفیسر مینرک نے کہا کہ ہمارے علم کے مطابق یہ انسانوں میں پہلا ثبوت ہے کہ خون کی نالیوں میں انسولین کے خلاف مزاحمت کو مختصر مدت کی منفی طرز زندگی کی تبدیلیوں سے پیدا کیا جا سکتا ہے۔

انھوں نے کہا یہ ایڈروپن کی سطحات میں تبدیلیوں کے ساتھ خون کی نالیوں میں انسولین کی مزاحمت پیدا ہونے کے سلسلے میں جنسی فرق کی پہلی دستاویز ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں