The news is by your side.

Advertisement

ملتان سے گرفتار لیاری گینگ وار کے کارندے کا 20 افراد کے قتل کا اعتراف.

کراچی: ملتان سے گرفتار ہونے والے لیاری گینگ وارکے کارندے نے دورانِ تفتیش دو پولیس انسپکٹروں سمیت 20 افراد کے قتل کا اعتراف کرلیا۔

تفصیلات کے مطابق ملتان سے گرفتار ہونے والے لیاری گینگ وارکے کارندے جاوید عرف جیدا سے تفتیش مکمل کرلی گئی ہے، دورانِ تفتیش ملزم نے پولیس افسران سمیت 20 افراد کے قتل کا اعتراف کیا ہے۔

امن کی بحالی کے لئے کراچی میں جاری آپریشن میں تیزی آتی جارہی ہے،آپریشن کے شروع ہوتے ہی جن دہشت گردوں نے گرفتاری سے بچنے کے لئےدوسرے شہروں کا رخ کیا۔ قانون نافذ کرنے والے ادارے کراچی سے ایسے مفرور ملزمان کی گرفتاری کے لئے دیگر شہروں میں بھی چھاپے مارہے ہیں۔

لیاری گینگ وار کے کارندے جاوید عرف جیدا نے ملتان میں پناہ لے رکھی تھی۔ ملزم نے گرفتاری کے بعد ہولناک انکشافات کرتے ہوئے دو پولیس اہلکاروں سمیت 20 افراد کو قتل کرنے کا اعتراف کیا ہے۔ ملزم سابق پولیس اہلکار ہے۔وہ گینگ وار کارندوں کو اسلحہ چلانے کی بھی تربیت دیتا تھا۔پولیس ملازمت کے دوران ملزم پولیس کی جانب سے کی جانے والی کاروائیوں کی پیشگی اطلاع گینگ وار کو دیا کرتا تھا۔اور پولیس کی ہر نقل و حرکت سے لیاری گینگ وار کارندوں کو آگاہ کرتا تھا۔
ملزم نے یہ بھی اعتراف کیا کہ لیاری گینگ وار کے دہشت گرد کو بچانے کے لئے اس نے اپنے ہی بہنوئی پولیس انسپکٹر اصغر اعوان کو بھی قتل کیا۔

ملزم نے دورانِ تفتیش یہ بھی بتایا کہ اس کا ایک بیٹا قتل کے الزام میں گرفتار ہےجبکہ دوسرا بیٹا مقابلہ کے دوران رینجرز کے ہاتھوں مارا جا چکا ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں