site
stats
پاکستان

کراچی والوں نے ساتویں سحری بھی اندھیرے میں گزاری

کراچی : ماہ رمضان میں بجلی کی اعلانیہ اور غیراعلانیہ لوڈشیڈنگ کاسلسلہ رک نہ سکا،سحر،افطاراورتراویح کے اوقات میں بجلی کی بندش نے شہریوں کے صبر کا پیمانہ لبریز کردیا،کراچی والوں نے ساتویں سحری بھی اندھیرے میں کی۔

تفصیلات کے مطابق ماہ صیام میں سارے حکومتی دعوی دھرے کے دھرے رہ گئے، پہلے روزے سے شروع ہونے والا لوڈ شیڈنگ کاسلسلہ روشنیوں کے شہر میں اب بھی اندھیرے پھیلا رہا ہے۔

کراچی سمیت اندروں سندھ مختلف شہروں میں بجلی کے بدترین بحران نے شہریوں کا جینا دو بھر کردیا ہے، مختلف علاقوں میں بھی آج بھی شہریوں نےسحری اندھیرے میں کی، ماڈل کالونی، ناظم آباد، لیاقت آباد، اورنگی ٹاؤن، گلستان جوہر، گلشن اقبال، پاک کا لونی، شیر شاہ، ہارون آباد بجلی کی غیراعلانیہ بندش سے متاثر ہیں۔

لوڈ شیڈنگ سے مستثنیٰ علاقوں کے مکینوں کا بھی بُراحال ہے، لوڈشیڈنگ کے لامتناہی سلسلے سے شہری شدید کرب میں مبتلا ہیں، لوڈشیڈنگ سے ستائے شہریوں نے احتجاج بھی کیا لیکن متعلقہ حکام کے کانوں میں جوں تک نہیں رینگی۔

شہریوں کا کہنا ہے کہ بجلی کی طویل بندش سے نہ صرف سحر و افطار میں مشکلات کا سامنا ہے بلکہ مساجد میں وضو کیلئے پانی کی دستیابی بھی محال ہوگئی ہے۔


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی وال پر شیئر کریں۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top