The news is by your side.

Advertisement

کرونا وائرس سے صحت یاب خاتون کو نئے مسئلے کا سامنا!

انگلینڈ کی رہائشی ایک خاتون کا کہنا ہے کہ انہیں کووڈ 19 کا شکار ہوئے 7 ماہ سے زائد کا عرصہ گزر چکا ہے تاہم ان کی سونگھنے اور چکھنے کی حس تاحال بحال نہیں ہوئی۔

44 سالہ سارا نامی یہ خاتون رواں برس مئی میں کووڈ 19 کا شکار ہوئی تھیں، ان کے مطابق اب 7 ماہ گزر جانے کے بعد بھی انہیں کافی کی خوشبو گاڑی کے دھوئیں جیسی لگتی ہے جبکہ ٹوتھ پیسٹ کا ذائقہ پیٹرول جیسا لگتا ہے۔

سارا کے مطابق انہیں مئی میں ابتدائی طور پر تھکن اور گلے کی سوزش کا سامنا ہوا تھا جس کے بعد انہوں نے اپنا ٹیسٹ کروایا، لیکن ٹیسٹ کی رپورٹ آنے سے قبل ہی وہ سونگھنے اور چکھنے کی حس سے محروم ہوگئیں۔

سارا کا کہنا ہے کہ کووڈ 19 سے صحت یاب ہوجانے کے بعد 6 ہفتے تک وہ دونوں حسوں سے محروم رہیں، اس کے بعد انہیں ایک نئے مسئلے کا سامنا ہوا۔

ان کے مطابق اب انہیں نمک والی اشیا صابن کے ذائقے جیسی محسوس ہوتی ہیں، کافی کی خوشبو گاڑی کے دھوئیں جیسی جبکہ چاکلیٹ کیک اس قدر کسیلا لگتا ہے کہ وہ بے اختیار اسے تھوک دیتی ہیں۔

سارا کا کہنا ہے کہ ان کے لیے کھانا پکانا اور کھانا نہایت مشکل ہے، کھانے سے اٹھنے والی مہک انہیں سخت پریشان کردیتی ہے۔ ہر کھانے سے قبل وہ اسے سونگھتی ہیں، اگر وہ مناسب لگے پھر اسے کھاتی ہیں۔

انہوں نے بتایا کہ کہ اب ان کی غذا چند مخصوص کھانوں پر مشتمل ہے جس میں مچھلی اور پنیر شامل ہے، تاہم انہیں خدشہ ہے کہ جلد وہ ان سے اکتا جائیں گی۔

یاد رہے کہ ڈاکٹرز کے مطابق کووڈ 19 کی وجہ سے سونگھنے اور چکھنے کی حس سے محروم ہوجانا عام علامت ہے کیونکہ وائرس ناک کے ریسیپٹرز کو نشانہ بناتا ہے۔

سارا نے فیس بک پر کووڈ 19 سے متاثر ہونے والے افراد کا ایک گروپ بھی بنا رکھا ہے جس میں لوگ اپنے تجربات شیئر کرتے رہتے ہیں۔ اس گروپ میں کئی دیگر افراد نے بھی سارا جیسی کیفیات کا سامنا کیا ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں