The news is by your side.

Advertisement

معمولی بات پر مدرسہ معلم کا گیارہ سالہ بچے پر بہیمانہ تشدد

رحیم یار خان: پنجاب کے شہر رحیم یار خان میں معلم نے مدرسے سے گھر بھاگ جانے والے بچے کو بہیمانہ تشدد کا نشانہ بنا ڈالا۔

پولیس حکام کے مطابق رحیم یار خان کے علاقے میں واقع کھڈالی بستی میں قائم مدرسے کے معلم نے گیارہ سالہ بچے پرویز کو انسانیت سوز تشدد کا نشانہ بنایا جس کی آواز سُن کر اہل علاقہ مدرسے پہنچے۔

عینی شاہدین کے مطابق معلم نے بچے کو رسیوں سے باندھ کر الٹا لٹکایا ہوا تھا اور وہ اُسے ڈنڈے سمیت دیگر چیزوں سے مار رہا تھا۔

پولیس کو جب واقعے کی اطلاع موصول ہوئی تو نفری مدرسے پہنچی اور علاقہ مکینوں کی درخواست پر معلم محمد قاسم سے تفتیش کی۔

مزید پڑھیں: راولپنڈی کے مدرسے میں بچے کو الٹا لٹکا کر تشدد، ویڈیو وائرل، معلم گرفتار

مدرسے کے استاد نے بتایا کہ بچہ دورانِ تعلیم کلاس میں بیٹھنے کے بجائے گھر بھاگ جاتا تھا، والدین اسے کئی بار چھوڑ کر گئے اور اسے متعدد بار سمجھایا مگر وہ باز نہیں آیا۔معلم نے بتایا کہ’’بات نہ ماننے اور پڑھائی سے بھاگنے پر بچے کو سزا دی‘‘۔

علاقہ مکینوں کی درخواست پر محمد قاسم کو گرفتار کر کے مقدمہ درج کرلیا گیا، پولیس کے مطابق بچے کا اسپتال میں طبی معائنہ کرایا گیا، اُس کے جسم پر تشدد کے نشانات واضح نشانات موجود تھے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں