صدر فضل الرحمان اوروزیراعظم عمران خان ہوں تو یہ تبدیلی ہوگی، محمود خان اچکزئی
The news is by your side.

Advertisement

صدر فضل الرحمان اوروزیراعظم عمران خان ہوں تو یہ تبدیلی ہوگی، محمود خان اچکزئی

کوئٹہ : پشتونخوا ملی عوامی پارٹی کے چیئرمین محمود خان اچکزئی نے کہا کہ صدر فضل الرحمان اوروزیراعظم عمران خان ہوں تو یہ تبدیلی ہوگی جبکہ مولانا فضل الرحمان کا کہنا ہے کہ پی پی اپنا امیدواردستبردارکردے تو اپوزیشن کی جیت پکی ہے۔

تفصیلات کے مطابق کوئٹہ میں محمود خان اچکزئی کے ہمراہ پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے مولانا فضل الرحمان نے کہا کہ ہم ملک میں جمہوریت اور جمہوری اداروں کو مستحکم دیکھنا چاہتے ہیں جس کے لئے اپوزیشن کا مضبوط اتحاد ضروری ہے۔

سربراہ جمعیت علماء اسلام کا کہنا تھا کہ اپوزیشن کا ملکی نظام میں ایک اہم کردار ہے، ہم چاہتے ہیں جمہوریت کے اس سفر میں پیپلز پارٹی ہمارے ساتھ رہے، وزیراعظم کے انتخاب میں اگر پیپلز پارٹی ساتھ دیتی تو شہباز شریف واضع اکثریت سے جیت جاتے، اب بھی پیپلز پارٹی ساتھ دے تو صدارتی انتخاب جیت جائیں گے۔

مولانا فضل الرحمان نے کہا محمود خان اچکزئی کی جماعت ہمارے ساتھ ہے، صدارتی انتخابات میں میری حمایت کی ہے، کوشش کریں گے کہ پیپلز پارٹی کو بھی قائل کریں۔

ان کا مزید کہنا تھا کہ پیپلزپارٹی نے اپنا امیدوار دستبردار کرا دیا تو ہماری جیت یقینی ہے، آج محمود اور مولانا الائنس ہے، میرے والد کا نام بھی محمود تھا، حزب اختلاف کے دو صدارتی امیدواروں کا رہنا، رضامندی کے ساتھ حکومت کو راستے دینے کے مترادف ہے۔

جمعیت علماء اسلام کے سربراہ نے کہا پاکستان میں جمہوری ادارے مستحکم ہونے چاہئیں، پاکستان کی آزادی کے مقاصد آج بھی حاصل نہیں ہوئے، آج کل
سیاست،معیشت اور دفاع دباؤ میں ہے، ہم نے داخلی خود مختاری محفوظ کرنی ہے۔

فضل الرحمان صدر اور وزیراعظم عمران خان ہوں تو یہ تبدیلی ہوگی، محمود خان اچکزئی

پشتونخوا ملی عوامی پارٹی کے چیئرمین محمود خان اچکزئی کا کہنا تھا کہ پیپلزپارٹی سے صدارتی امیدوار پر بات ضرور کریں گے، جب ٹھنڈی تاراورگرم تار ملتےہیں تو بجلی پیدا ہوتی ہے۔

محمود خان اچکزئی نے کہا کہ فضل الرحمان صدر اور وزیراعظم عمران خان ہوں تو یہ تبدیلی ہوگی، ماضی کوبھول جاتے ہیں،جمہوری پاکستان بنائیں ، بہترین پاکستان ہم سب کی منزل ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں