The news is by your side.

Advertisement

گرفتارمرکزی ملزم کا 12سالہ بچے کا گلا دبا کر گڑھے میں پھینک کر تیزاب ڈالنے کا اعتراف

کراچی : 12سالہ مغوی بچے کو گلا دبا کر گڑھے میں پھینک کرتیزاب ڈالنے کے کیس میں گرفتار مرکزی ملزم سلمان نے اعتراف جرم کرلیا، حکام نے بتایا کہ شاہد کو سعیدآباد سے اغوا کیا گیا تھا اور شناخت ہونے کے ڈر سے بچے کو قتل کردیا۔

تفصیلات کے مطابق کراچی میں 12سالہ مغوی بچے کوگلادباکرگڑھےمیں پھینک کرتیزاب ڈالنے کے معاملے پر گرفتار مرکزی ملزم سلمان نے اغوا کے بعد قتل کااعتراف کرلیا۔

اےوی سی سی حکام نے کہا کہ 6 جنوری کو 12سالہ شاہد سعیدآبادسےاغواہواتھا، ملزمان نےشاہدکو70لاکھ روپےتاوان کیلئےاغواکیا، ملزم سلمان نےون فائیو مددگار پر 8ماہ کنٹریکٹ پر کام کیا۔

حکام کا کہنا تھا کہ بچے شاہد کے والد اپنے 2پلاٹ فروخت کررہے تھے اور پلاٹ فروخت کرکے 70لاکھ کا ایک بڑا پلاٹ لینا چاہ رہے تھے، اسٹیٹ ایجنسی اور دیگر ذرائع سے سلمان تک بات پہنچی، گرفتارملزم سلمان علاقے میں ہی رہتا تھا۔

اے وی سی سی نے بتایا کہ 12 سالہ شاہد علی نے ملزم کوپہچان لیاتھا، شناخت ہونے کے ڈر سے ملزم نے بچے کو قتل کیا، تاوان مانگتے وقت ملزم نے پلاٹ کی فروخت کابھی ذکرکیا۔

پولیس کی جانب سے گرفتارمرکزی ملزم سلمان سے مزید تفتیش جاری ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں