The news is by your side.

Advertisement

ریلوے کراسنگ پر حادثات کی روک تھام کیلئے حکام کا بڑا اقدام

لاہور : ریلوے کراسنگ پر حادثات کی روک تھام کےلیے ریلوے راولپنڈی ڈویژن نے مینڈ لیول ریلوے کراسنگ کی حدود میں ان مینڈ ریلوے کراسنگ ختم کرنے کا فیصلہ کرلیا۔

ریلوے کراسنگ پر حادثات رونما ہونا قریباً روز کا معمول بن چکا ہے جس کے سدباب کےلیے پاکستان ریلوے کے راولپنڈی ڈویژن نے حکمت عملی تیار کرلی، حکمت عملی سے متعلق ڈویژنل سپرنٹنڈنٹ ریلوے منور شاہ کی زیر صدارت اجلاس میں فیصلے کیے گئے۔

اجلاس کے دوران فیصلہ کیا گیا کہ مین لائن اور برانچ لائنوں کے 632 کلومیٹر ٹریک پر ملازمین کو تربیت دی جائے گی جبکہ مینڈ لیول ریلوے کراسنگ کی حدود میں ان مینڈ ریلوے کراسنگ ختم کردیا جائے گا۔

اجلاس میں غیرقانونی گزرگاہ پر حادثات کی صورت میں مقدمات کے انداراج کا فیصلہ بھی کیا گیا جبکہ ٹرین اپروچنگ وارننگ سسٹم کو پہلی مرتبہ متعارف کرانے کا فیصلہ بھی ہوا۔

اجلاس میں کہا گیا کہ پہلی مرتبہ ساڑھے تین کلومیٹڑ کے فاصلے پر خبردار کرنے والا نیا سسٹم لگایا جائے گا جبکہ مین لائن پر 13 ان مینڈ ریلوے کراسنگ کو اپ گریڈ کردیا گیا۔

شیخوپورہ ٹرین حادثہ، جاں بحق ہونے والے 19 سکھ یاتریوں کی آخری رسومات ادا

خیال رہے کہ 3 جولائی کو شیخوپورہ میں ننکانہ صاحب کی یاترا سے واپس آتے ہوئے سکھ یاتریوں کی بھری ہوئی کوسٹرٹرین کی زدمیں آگئی تھی، جس میں بائیس افرادلقمہ اجل بن گئے تھے، مرنے والوں میں دس خواتین اور ایک بچہ بھی شامل تھا۔

fb-share-icon0
Tweet 20

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں