ملائیشیا نے شمالی کوریا کے سربراہ کے سوتیلے بھائی کے قتل پر سفارت کار تک رسائی مانگ لی
The news is by your side.

Advertisement

ملائیشیا نے شمالی کوریا کے سفارت کار تک رسائی مانگ لی

کوالالمپور : ملائیشیا نے شمالی کوریا کے سفارتخانے کے ایک سینیئر اہلکار کو تلاش کرنے اور ان سے تفتیش کے لیے رسائی حاصل کرنے کی درخواست کر دی ہے۔

تفصیلات کے مطابق ملائیشیاء نے یہ درخواست شمالی کوریا کےسربراہ کے سوتیلے بھائی’’ کم جونگ نام‘‘ کے قتل کی تفتیش کے سلسلے میں کی ہے جس کے بارے میں شبہ ہے کہ متعلقہ اہلکار اہم معلومات فراہم کر سکتا ہے۔

واضح رہے شمالی کوریا کے سربراہ  کے سوتیلے بھائی ’’کم جونگ نام ‘‘کی لاش گذشتہ ہفتے کوالالمپور کے ہوائی اڈے پر تھی جن کی موت کا تعین نہیں کیا جا سکا تھا اور نہ ہی قاتل سے متعلق کچھ معلومات حاصل ہو سکی تھیں۔

یہ بھی پڑھیں : شمالی کوریا کے سربراہ کا سوتیلا بھائی ملائیشیا میں پراسرارطورپرہلاک

تاہم ابتدائی تفتیش کے بعد پولیس نے تصدیق کی ہے کہ سربراہ شمالی کوریا کے سوتیلے بھائی کو زہر دیا گیا تھا جب کہ وہ بورڈنگ میں اپنی پرواز کا انتظار کر رہے تھے۔

زرائع کا کہنا ہے کہ ’’کم جونگ نام ‘‘ پر حملہ کیا گیا تھا جس کے دوران دو خواتین نے ان کے چہرے پر زہریلہ مواد لگا دیا تھا جس کے باعثڈ ان کی موت واقع ہو گئی تھی۔

بین الاقوامی خبر رساں ادارے بی بی سی کے مطابق جاپانی ٹی وی پر ایک سی سی ٹی وی فوٹیج دکھائی گئی تھی جس میں بہ ظاہر ’’کم جونگ نام ‘‘ پر حملہ ہوتے ہوئے دکھایا گیا تھا تاہم اس سے بھی صورتِ حال مکمل طور پر واضح نہیں ہو سکی ہے۔

دریں اثناء اس واقعے کے نتیجے میں شروع ہونے والے تنازعے کی شدت میں اضافے کے بعد ملائیشیا نے پیونگ یانگ سے اپنے سفیر کو واپس بلا لیا تھا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں