The news is by your side.

Advertisement

ملیشیا کے وزیراعظم مہاتیر محمد بھارت کے خلاف ڈٹ گئے

کوالالمپور: ملیشیا کے وزیراعظم مہاتیرمحمد بھارت کے خلاف ڈٹ گئے، اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی سے کشمیریوں کے حق میں دیے گئے بیان پر قائم رہنے کے عزم کا اظہار کیا۔

تفصیلات کے مطابق ملیشیا کے وزیراعظم مہاتیر محمد نے اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی سے خطاب کرتے ہوئے بھارتی جارحیت سے دنیا کو آگاہ کیا تھا اور مظلوم کشمیریوں کی آواز بنے تھے۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کے مطابق ان کے اس بیان کے بعد بھارت نے ملیشیا پر شدید برہمی کا اظہار کرتے ہوئے تجارتی معاملات ختم کرنے کا بھی عندیہ دیا تھا۔

دباؤ کے باوجود ملیشیا کے صدر اپنے بیان پر قائم ہیں، ان کا کہنا ہے کہ کشمیری عوام کو حق خود ارادیت ملنا چاہیئے، تجارت اہم ہے لیکن عوام کو پس پشت نہیں ڈالا جاسکتا۔

مقبوضہ کشمیرکی صورتحال، ملائیشین وزیراعظم میدان میں آگئے ، مودی پریشان

خیال رہے کہ مہاتیرمحمد نے اقوام متحدہ میں تقریر میں کہا تھا کہ بھارت نے کشمیرپرحملہ کر کے قبضہ کیا ہوا ہے، اقوام متحدہ کی قراردادوں کے باوجود بھارت نے مقبوضہ کشمیرپرقبضہ کیا ہوا ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ کشمیر کے مسئلے کو پرامن طریقے سے حل ہونا چاہیے، بھارت کو پاکستان کے ساتھ کام کرنا چاہیے تاکہ یہ مسئلہ حل ہو اور اقوام متحدہ کی قراردادوں کو نظرانداز نہیں کرنا چاہیے کیونکہ یہ اقدام عالمی ادارے اور قانون کی حکمرانی کو دیگر طریقے سے نظرانداز کرنے کا باعث بنے گا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں