The news is by your side.

Advertisement

ملائشین وزیراعظم کے ذاتی اکاؤنٹ میں فنڈزسعودی حکمرانوں تحفہ قرار

کوالا لمپور: ملائیشیا کے وزیر اعظم پر کرپشن کے الزام کا معاملہ اختتام کو پہنچ گیا، اٹارنی جنرل نے سعودی تحفہ قرار دے کر اپوزیشن کو چپ کرادیا۔

تفصیلات کے مطابق گزشتہ سال ملائیشیا کے وزیر اعظم نجیب رزاق کے ذاتی بینک اکاؤنٹ میں 681 ملین ڈالر کی رقم ٹرانسفر کی گئی تھی، جس کو بنیاد بنا کر اپوزیشن نے ملائیشن وزیراعظم نجیب رزاق پر کرپشن کا الزام عائد کیا تھا۔

http://s27.postimg.org/a6q54c0wz/download.jpg

جس کے جواب میں اٹارنی جنرل محمد اپندی علی کا کہنا ہے کہ رقم کے حوالے سے تحقیقاتی ٹیم کی رپورٹ کے مطابق 681 ملین ڈالرکی رقم سعودی حکمرانوں کی جانب سے وزیر اعظم کو بطور تحفہ دی گئی ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ اس بات کو ایشو بنا کر کوئی ایکشن نہیں لینا چاہیئے، دوسری جانب وزیراعظم نجیب رزاق کا کہنا تھا کہ میں نے کوئی جرم نہیں کیا ہے جبکہ اپوزیشن اراکین نے تحقیقاتی ٹیم کی رپورٹ کو مسترد کر دیا ہے۔

تجزیہ کاروں کا کہنا ہے کہ اٹارنی جنرل کے بیان سے وزیراعظم نجیب رزاق کے مؤقف کی جیت ہوئی ہے اور آئندہ الیکشن میں یہ بات نجیب رزاق کیلئے اہمیت کی حامل ہے.

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں