The news is by your side.

Advertisement

ٹیٹو بنوانے کا جنون، تصاویر دیکھ کر آپ حیران رہ جائیں‌ گے

کوپن ہیگن: ڈنمارک کے ایک شہری نے ٹیٹو کے شوق اور خوب صورت نظر آنے کے چکر میں پورا جسم گدوا لیا۔

تفصیلات کے مطابق ڈنمارک کے شہری ٹرسٹن ویگلٹ نے ٹیٹو بنوانے کے جنون میں‌ جسم کا 95 فی صد حصہ ٹیٹوز سے بھر دیا ہے، یہاں‌ تک کہ اب وہ پرانی تصاویر سے نہیں پہچانا جا رہا۔

25 سالہ ٹرسٹن ویگلٹ نے جسم کو ٹیٹوز میں ڈھانپنے کے لیے 54,031 ڈالر خرچ کیے ہیں، اور اس عمل کے لیے انھیں سوئی کے نیچے 260 تکلیف دہ گھنٹے گزارنے پڑے، اور اب وہ صرف پانچ سال بعد ایک بالکل ہی مختلف شخص لگ رہا ہے۔

ٹرسٹن نے 2018 میں جسم پر ٹیٹو گدوانے شروع کیے تھے اور 2022 تک وہ پورے جسم کو رنگ میں بھر چکا ہے، اب صرف ان کی ہتھیلیاں، شرمگاہ، تلوے اور کان سیاہی سے خالی ہیں۔

ٹرسٹن نے میڈیا سے گفتگو میں بتایا کہ ان تمام ٹیٹوز کے بغیر اب اپنے آپ کو دیکھنا ایک عجیب سی بات ہے، اور مضحکہ خیز بات یہ بھی ہے کہ میں اب بھی اندر سے پہلے جیسا ہی محسوس کرتا ہوں۔

امریکی نژاد ٹرسٹن اب کوپن ہیگن میں رہائش پذیر ہیں اور انسٹاگرام پر بہت زیادہ فالوونگ کے ساتھ ایک مشہور شخصیت بن چکے ہیں، ان کا کہنا ہے کہ انھیں بہت سارے لوگ گھورتے ہیں اور کافی متوجہ ہوتے ہیں، میرے دوست بھی کہتے ہیں کہ تمھارے ساتھ گھومنا کسی مشہور شخصیت کے ساتھ گھومنے پھرنے جیسا ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں